February 8, 2020 at 11:00 am

Delhi's Elections 2020

بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی کے ریاستی اسمبلی انتخابات کے لیے ووٹنگ جاری ہے۔

ذرائع کے مطابق نریندرا مودی کی انتہا پسند پالیسیوں کے خلاف نئی دہلی کے عوام اپنا حق استعمال کرتے https://www.khabarwalay.com/2020/02/08/18462/ہوئے ایک مرتبہ پھر انہیں مسترد کر دیں گے۔

بھارت میں شہریت کا متنازعہ قانون اور کشمیر میں کشمیریوں کو حاصل خصوصی حق چھیننے پر لوگ کافی غصہ میں ہیں۔

یہی وجہ ہے کہ دہلی میں پچھلے 50 روز سے سول سوسائٹی کے لوگ دھرنا دیے بیٹھے ہیں۔

عام آدمی پارٹی دوسری مرتبہ پھر بھارت کی حکمراں جماعت بی جے پی کو شکست دینے کے لیے تیار ہے۔

پچھلے انتخابات میں اروند کیجریوال کی جماعت عام آدمی پارٹی نے مودی کی پارٹی کو شکست دیتے ہوئے ریاست میں کلین سوئپ کیا تھا۔

نئی دہلی اسمبلی کی 70 نشستوں پر آج ووٹنگ بغیر کسی تعطل کے شام 6 بجے تک جاری رہے گی۔

نئی دہلی میں مجموعی طور پر ایک کروڑ 47 لاکھ افراد ووٹ دینے کا حق رکھتےہیں۔ ووٹرز کی سہولت کے لیے 13 ہزار750 پولنگ اسٹیشن بنائے گئے ہیں۔

پوری ریاست میں امن و امان یقینی بنانے کے لیے 90 ہزار پولیس اہلکار تعینات کیے گئے ہیں۔

اس مرتبہ بھارتیہ جنتہ پارٹی نے عام آدمی پارٹی کا مقابلہ کرنے کے لیے انتہائی جارحانہ حکمت عملی اختیار کی ہے۔

آج ووٹنگ کا عمل مکمل ہونے کے بعد منگل 11 فروری کو ووٹوں کی گنتی کی جائے گی۔

گزشتہ انتخابات میں عام آدمی پارٹی کو ستر رکنی ایوان میں 67 اور بی جے پی صرف 3 نشستیں ہی حاصل کر پائی تھی۔

بدقسمتی سے ملک پر سب سے زیادہ حکمرانی کرنے والی جماعت کانگریس ایک نشست بھی حاصل نہیں کرسکی تھی۔

یاد رہے دہلی اسمبلی کی مدت 22 فروری کو ختم ہو رہی ہے۔

Facebook Comments