افغانستان کے صوبے ننگرہار میں فائرنگ، امریکی اور افغان فوجی ہلاک

afghanistan
شیئر کریں:

افغانستان کے صوبے ننگرہار میں فائرنگ سے 12 امریکی اور افغان فوجی ہلاک ہو گئے۔

ذرائع کے مطابق فوجی اہلکاروں میں 6 امریکی اور 6 افغان شامل ہیں۔ امریکی حکام کی جانب سے ننگرہار میں امریکی اور افغان فوج پر حملے میں ہونے والی ہلاکتوں کی تفصیلات جاری کر دی گئی ہیں۔

امریکی حکام کا ماننا ہے کہ ان کے 6 فوجی اہلکار اس حملے میں مارے گئے ہیں۔مجموعی طور پر ہلاک ہونے والے 12 فوجیوں میں سے 6 افغان فوجی ہیں۔ ننگرہار میں جماعت الااحرار کے دہشت گرد بھی بڑی تعداد میں مارے گئے تھے۔

دوسری جانب جلال آباد سے بھی اطلاعات ہیں کہ وہاں امریکا اور افغان فورسز کے درمیان دو طرفہ فائرنگ کا تبادلہ ہوا ہے۔گزشتہ شب ننگرہار کے ضلع شیرزاد میں ایک آپریشن کے دوران افغان و امریکی فورسز کے درمیان گھمسان کی جنگ ہوئی ـ

دونوں جانب سے فائرنگ کا خوب تبادلہ ہوا اور 4 امریکی فوجی ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے۔

ذرائع کا کہنا ہے اس لڑائی آئی میں افغان فورسز کے بھی 4 اہلکار ہلاک ہوئے ہیں۔

ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ فائرنگ نامعلوم مقام سے ہوئی تاہم علاقائی حکام نے خبر کی تصدیق کردی ہے ـ

ضلع شیرزاد کا کچھ حصہ افغان طالبان کے قبضے میں ہے جس کی وجہ سے یہاں آئے روز آپریشنز جاری رہتے ہیں۔افغانستان میں اس نوعیت کی لڑائی کے واقعہ پہلے بھی پیش آچکا ہے لیکن اس مرتبہ یہ سنگین نوعیت کا واقعہ ہے۔ افغانستان کے حالات مزید خراب ہونے کی پیش گوئی کی ہے۔


شیئر کریں: