بھارت میں مزید 2 بہنوں کی عزتیں لوٹ لی گئیں

شیئر کریں:

بھارت کی سب سے بڑی ریاست اترپردیش میں خواتین کی عصمت دری کے واقعات تھمنے میں نہیں آرہے
ہیں۔ ریاست میں انسانیت کے روپ میں بھیڑیوں نے مزید دو بہنوں کی عزت تار تار کر دی۔

ضلع ایٹاوا میں پیش آنے والے واقعہ نے ایک مرتبہ پھر سے انسانیت کو شرمسار کر دیا لیکن انتظامیہ نے اب
بھی بے حسی اختیار کر رکھی ہے۔
تین ملزمان دونوں بہنوں کو اغوا کر کے دکان میں لے گئے جہاں انہیں زبردستی پہلے شراب پلائی اور پھر
بے دردی سے ان کی عزتیں پائمال کی گئیں۔ انسانیت کے دشمنوں نے ان پر بہمانہ تشدد بھی کیا۔

پولیس کے مطابق وہ رات میں گشت پر تھے کہ تین ملزمان انہیں دیکھ کر بھاگ رہے تھے جس پر انہیں
پکڑا تو اس دوران لڑکیوں کے چیخنے چلانے کی آوازیں آئیں۔

پولیس نے دکان میں دو لڑکیوں کو عریاں حالت میں پایا اور جسم سے خون نکل رہا تھا۔ لڑکیوں کو اسپتال
پہنچایا گیااور اجتماعی زیادتی ثابت ہونے پر ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔
بھارت میں خواتین سے زیادتی کے واقعات میں کمی کے بجائے اضافہ ہوتا جارہا ہے۔ انسانی حقوق کی
تنظیموں کی جانب سے احتجاجی مہم کے باوجود انتظامیہ درندوں کو خواتین کی عزت سے کھیلنے سے
باز رکھنے میں مکمل طور پر ناکام دیکھائی دیتی ہے۔

بھارت میں غیرملکیوں خواتین کے ساتھ بھی اس نوعیت کے ان گننت واقعات رونما ہو چکے ہیں۔ عالمی
رپورٹس میں بھارت کو خواتین کے لیے انتہائی غیر محفوظ ملک بھی قرار دیا جا چکا ہے۔


شیئر کریں: