کورونا کا پھیلاؤ، پنجاب میں تعلیمی ادارے بند، ٹرانسپورٹ پر پابندی

شیئر کریں:

کورونا کےبڑھتے ہوئےکے رجحان اورانتہائی نگہداشت کی سہولیات پر دباؤ کی روشنی میں وزیر اعظم
کو وفاقی وزیر اسد عمر کی قیادت میں این سی او سی نے بریفنگ دی۔ شرکا ء نے پنجاب خیبر پختون خواہ
اور اسلام آباد کے منتخب اضلاع کے لیے این پی آئیز کاجائزہ لیا۔

این سی او سی کی بریفنگ پر فیصلہ کیا گیا کہ بیماری کا پھیلاؤ کم کرنے کے لیے منتخب اضلاع میں 4
سے 12 ستمبر تک اضافی این پی آئیز نافذ کی جائیں گی۔
فیصلوں کی روشنی میں تعلیمی شعبے ایک بار پھر سے بند کیے جارہے ہیں۔
بیماری کے زیادہ پھیلاؤ والے اضلاع اور شہروں میں انٹرسٹی ٹرانسپورٹ کی آمد و رفت پر پابندی عائد
کی جارہی ہے۔
ان ڈور اور آؤٹ ڈور تمام تقریبات پر پابندی ہو گی۔
شادی بیاہ کی تقریبات کی اجازت صرف آؤٹ ڈور اور 300 افراد تک تعداد سے مشروط ہو گی۔
انڈور جم پر بھی پابندی لگا دی گئی ہے۔
نئی پابندیوں کا فوری طور پر اطلاق ان شہروں میں کیا جارہا ہے۔

پنجاب کے سرگودھا ، خوشاب۔ میانوالی ، رحیم یار خان ، خانیوال ، فیصل آباد ، بھکر ، گجرات ، گوجرانوالہ
ملتان ، بہاولپور ، لاہور ، راولپنڈی ، سیالکوٹ ، شیخوپورہ
خیبرپختونخواہ کے ہری پور ، مالاکنڈ ، مانسہرہ ، صوابی ، ڈی آئی خان ، سوات ، ایبٹ آباد ، پشاور اور
پورا اسلام آباد شامل ہے۔


شیئر کریں: