افغانستان میں سید الشہدا اسکول پر حملہ لڑکیوں سمیت 60 افراد ہلاک درجنوں زخمی

شیئر کریں:

افغانستان کے دارلحکومت کابل میں اسکول کے طلبہ و طالبات کو دہشت گردوں نے نشانہ بنایا ہے۔ دھماکے
سے لڑکیوں سمیت 60 سے زائد افراد ہلاک ہو گئے۔ واقعہ میں پچاس زخمی بھی ہوئے ہیں۔

دھماکا کابل کے قریب شیعہ اکثریتی علاقے دشت برچھی میں کیا گیا جہاں سید الشہدا اسکول کے باہر دھماکا
کیا گیا۔ کلاس ختم ہوتے ہی جیسے طلبا باہر نکلے وہ اس دھماکے کا نشانہ بن گئے۔
دہشت گردی کے اس واقعہ میں زیادہ تر لڑکیاں ہلاک اور زخمی ہوئی ہیں۔ امریکی اور اتحادی فوج کی واپسی
میں تاخیر پر افغانستان میں حالات ایک بار پھر سے کشیدہ ہو گئے ہیں۔
یکم مئی کے بعد سیکیورٹی فورسز پر حملے اور بم دھماکوں میں اضافہ ہوا ہے۔ صدر اشرف غنی اور یورپی یونین
نے اس حملے کی شدید مزمت کی ہے۔
خیال رہے اسی علاقے میں گزشتہ مئی میں اسپتال پر حملہ کیا گیا تھا جس میں نومولود بچوں کی 16 ماؤں
سمیت 25 سے زائد خواتین ہلاک ہوئی تھیں۔


شیئر کریں: