امریکا میں شہادت حضرت علی علیہ السلام کی مجلس اور جلوس

شیئر کریں:

نیویارک سے خالد بلتی
شہادت حضرت علی ابن ابی طالب کے سلسلے میں امریکا کے شہر جمیکاں کوئنز میں جلوس برآمد ہوا۔ جلوس
سے قبل مجلس عزا ہوئی جس میں ضربت امام علی علیہ السلام بیان کی گئی۔

19 رمضان المبارک کی صبح نماز فجر میں ابن ملجم لعین نے سجدہ میں زہر آلود تلوار سے مولائے کائنات کے ضرب
لگائی۔ تین رات شدید کرب میں رہنے کے بعد 21 رمضان کو شہادت ہوئی۔ علما نے بیان کیا کہ کائناب میں کوئی
ایسی دوسری شخصیت نہیں جس کی پیدائش خانہ کعبہ اور شہادت مسجد میں ہوئی ہو۔ اور نہ ہی کوئی باپ
بیٹا ایسا ہو جن کی شہادت نماز میں ہوئی ہو۔

امام حسین علیہ السلام کی شہادت دشت کربلا میں نماز عصر کے دوران حالت سجدہ میں شہادت ہوئی اور امام
کے والد گرامی کی شہادت مسجد کوفہ میں ہوئی۔

مصائب امام علی علیہ السلام کے بعد جمیکاں کوئنز سے تابوت برآمد ہوا اور سوگوار نوحہ خوانی کرتے ہوئے
امام الخوی سینٹر پہنچے۔ جلوس کے اختتام پر ہر سال کی طرح اس سال بھی افطار کا انتظام کمیونیٹی کے سماجی
شخصیت چوہدری رزاق نے کیا۔
خیال رہے یہ جلوس جعفریہ کونسل آف نارتھ امریکہ کے زیر سرپرستی نکالا جاتا ہے۔ جلوس میں کورونا وائرس سے
بچاؤ کے لیے رائج تمام ایس او پیز پر عملدرآمد یقینی بنایا گیا۔


شیئر کریں: