مودی نے آکسیجن اور ویکسین کے بجائے 73 ارب ڈالر فوج پر لگا دیے

شیئر کریں:

بھارتی وزیر اعظم نریندرا مودی کے جنگی جنون اور خودنمائی نے بھارتی عوام کو مروا دیا۔ کورونا وائرس کی
مہلک وبا کے باوجود اسلحہ کی خریداری اور فوج پر 72.9 ارب ڈالر خرچ کر دیے۔ اگر یہی پیسا ویکسین،
ادویات، اسپتالوں اور آکسیجن پر لگایا ہوتا تو لوگ سڑکوں پر اپنی جانیں نہیں دے رہے ہوتے۔ اسلحہ کی
خریداری میں امریکا اور چین کے بعد بھارت کا 2020 میں تیسرا نمبررہا۔

پانچ ملکوں‌ نے اسلحہ کی خریداری پر اربوں‌ ڈالر خرچ کر دیے

اسٹاک ہام انٹرنیشنل پیس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کی رپورٹ دنیا بھر کے ممالک کی جانب سے 2020 میں آرمی
پر کیے گئے اخراجات کی رپورٹ جاری کی ہے۔ رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس کی وبا کے دور میں بھی امریکا،
چین، بھارت، روس اور برطانیہ نے اسلحہ کی خریدوفروخت پر اربوں ڈالرز خرچ کر دیے۔

ان پانچوں ممالک میں کورونا کی وجہ سے بڑی تعداد میں اموات ہوئی ہیں۔ 2020 میں دو کھرب ڈالرز جنگی
جنون پر لگائے گئے وبا کی موجودگی میں اس بجٹ میں کمی کے بجائے اس میں 2.6 فیصد اضافہ کیا گیا۔ دنیا
کے پانچ بڑے ممالک امریکا، چین، بھارت، روس اور برطانیہ کا 2 کھرب ڈالر میں سے 62 فیصد بنتا ہے۔

امریکا نے 2019 کے مقابلے میں 4.4 فیصد اضافے کے ساتھ مجموعی طور پر 778 ارب ڈالرز جنگی جنون پر صرف
کیے۔ امریکا نے مسلسل تیسرے سال اپنے فوجی بجٹ میں اضافہ کیا ہے۔

دوسرے نمبر پر چین ہے جس نے گزشتہ سال کے مقابلے میں 1.9 فیصد بجٹ میں اضافہ کر کے 2020 میں 252
ارب ڈالر فوجی سازوسامان پر لگا دیے۔ چین پچھلے 26 سال سے مسلسل اپنی فوج کے بجٹ میں اضافہ کر رہی ہے۔

جنوبی کوریا اور چلی نے فوج کا فنڈ کورونا پر لگا دیا

دنیا کے دو ممالک جنوبی کوریا اور چلی نے اپنی آرمی کے لیے مختص فنڈ کورونا وائرس سے نمٹنے پر لگا دیا۔ اسی
طرح برازیل اور روس نے بھی اپنے فوجی فنڈ میں کمی کی۔

روس کی جانب سے بجٹ میں کمی کے باوجود پھر بھی اس کا اسلحہ کی خریداری میں چوتھا نمبر آتا ہے۔
اگر بھارت چین اور پاکستان کے خلاف محاذ آرائی نہ کرے، امن کا راستہ اختیار کرے تو پھر اربوں ڈالر جنگی
سازو سامان کے بجائے عوام کی زندگی بہتر بنانے پر خرچ کیے جاسکتے ہیں۔

یہی وجہ ہے کہ غربت اور علاج کی بہتر سہولت نہ ہونے کی وجہ سے بھارت میں قبرستان اور شمشان
گھاٹ کم پڑ گئے۔ سڑکوں اور اسپتالوں کی دہلیز پر دم توڑتی انسانیت ان حکمرانوں کے چہرے پر کلنگ
کا ٹیکہ بن چکی ہے۔


شیئر کریں: