ایران کی ڈرون ٹیکنالوجی اسرائیل، سعودی عرب اور امریکا کے لیے درد سر

شیئر کریں:

ایران نے معاشی اور عسکری پابندیوں کے باوجود ڈرون ٹیکنالوجی میں بہت ترقی کر لی ہے۔ آرمی ڈے پریڈ میں
ایرانی فوج نے اپنی ڈرون ٹیکنالوجی کی مہارت دنیا کے سامنے پیش کی۔

اسرائیلی اخبار نے اعتراف کیا ہے کہ ایران ڈرون ٹیکنالوجی میں رواں سالوں کے دوران سپر پاور کی حیثیت اختیار
کر چکا ہے۔ اب وہ یمن کے حوثیوں، شام اور لبنان کو بھی برآمد کر رہا ہے۔

ایران نے 2 ہزار کلو میٹر تک بڑی مقدار میں دھماکا خیز مواد سے حملہ کرنے کی صلاحیت والے ڈرونز بھی بنا رکھے ہیں۔

دنیا کے بااثر مسلمان ملک سعودی عرب ایران کا کئی سال بعد پہلا رابطہ

جون 2019 میں ایران نے امریکا کا جدید ترین ڈرون گلوبل ہاکس سرویلنس مار گرایا تھا۔ اس کی کاپی بھی
تہران نے تیار کر لی اور سے بھی جدید ڈرونز تیار کر کے اسرائیل، سعودی عرب اور امریکا کو پریشان کر دیا ہے۔

ایران نے ڈرونز اور سامان حرب میں کی تیاری میں بہت ترقی کر لی ہے آرمی ڈے پریڈ میں جدید نوعیت کے
سامان کی نمائش کی جس سے خطے کے ممالک میں پریشانی کی لہر دوڑ گئی ہے۔


شیئر کریں: