وزیراعظم نے کورونا وائرس کے دوران وزرا کو گھر کیوں بلایا؟نئی بحث چھڑ گئی

شیئر کریں:

وزیر اعظم عمران خان نے کورونا کے دوران ہی اجلاس بلالیا۔ شبلی فراز اور فیصل جاوید سمیت پوری
میڈیا ٹیم بنی گالا پہنچی۔ عمران خان سمیت تمام افراد فاصلے سے بیٹھے۔
سینیٹر شبلی فراز نے اپنے ٹوئیٹر ہینڈل پر اجلاس کی دو تصاویر جاری کیں۔ تاہم انہوں نے اس حالت
میں اجلاس بلائے جانے کی وجہ نہیں بتائی۔

کورونا ہونے کے بعد ہر شخص پر لازم ہے کہ وہ خود کو تنہا کر لے اور کم از کم چودہ دن قرنطینہ کرے۔
امریکا، برطانیہ اور دنیا کے کئی ممالک کے سربراہان کورونا کا شکار ہوئے۔ ان میں سے کسی نے بھی کوئی
اجلاس نہیں بلایا۔ سب نے ویڈیو پیغام کے ذریعے یا موبائل فون پر احکامات سادر کیے لیکن عمران خان
کی اس تصویر نے سوشل میڈیا پر سب کو حیران اور پریشان کر دیا۔

وزیراعظم عمران خان کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا

سوشل میڈیا پر سب ہی سوال کر رہے ہیں کہ آخر ایسا کیا ہوا تھا کہ جو تمام افراد کو گھر پر بلا لیا؟
ملک میں سیاسی حالات بھی اطمینان بخش ہیں اور حکومت کو بھی کسی قسم کا خطرہ نہیں تو پھر سب
کی زندگیوں کو کیوں خطرہ میں ڈالا گیا؟

حکومت ایک جانب سب کو احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی تاکید کر رہی ہے اور دوسری جانب
وزیر اعظم نے اپنی میڈیا ٹیم کو گھر بلا لیا۔


شیئر کریں: