سینیٹ میں تحریک انصاف سب سے بڑی جماعت بن گئی پیپلز پارٹی دوسرے نمبر پر آگئی

شیئر کریں:

سینیٹ کی 48 نشستوں پر ہونے والے انتخابات میں تحریک انصاف نے 18 جیت لیں۔ پیپلز پارٹی 8،
بلوچستان عوامی پارٹی 6، مسلم لیگ ن 5، جے یو آئی 3، اے این پی 2، ایم کیو ایم 2، آزاد 2، مسلم
لیگ ق کی ایک اور بی این پی مینگل نے ایک سیٹ پر کامیابی حاصل کی۔

اپوزیشن اتحاد کے یوسف رضا گیلانی کامیاب ہوگئے

اس طرح تحریک انصاف سینیٹ میں سب سے بڑی جماعت بن گئی پی ٹی آئی نے حالیہ الیکشن میں اٹھارہ
نشستوں پر کامیابی حاصل کی، ایوان بالا میں نشستوں کی تعداد چھبیس ہو گئی۔
آٹھ سیٹوں پر کامیابی کے ساتھ پیپلز پارٹی کے سینیٹ میں ارکان بیس ہو گئے۔ مسلم لیگ نون نے حالیہ انتخابات
میں پانچ نشستیں جیتیں، ان کے سینیٹرز کی تعداد اٹھارہ ہو گئی۔
بلوچستان عوامی پارٹی نے چھ نشستیں جیت کر ایوان میں اپنے ارکان کی تعداد بارہ کر لی۔ تین مزید نشستوں
کے ساتھ جے یو آئی ف کے سینیٹرز کی تعداد پانچ ہو گئی۔
ایم کیو ایم نے مزید دو نشستوں پر کامیابی سمیٹ کر اپنے اراکین کی تعداد تین کر لی ہے۔ عوامی نیشنل پارٹی
دو، مسلم لیگ ق اور بی این پی مینگل ایک ایک سینیٹ نشست جیت کر ایوان بالا کا حصہ بنی۔

بلوچستان سے دو آزاد سینیٹر بھی منتخب ہوئے، سینیٹ میں آزاد ارکان کی تعداد چھ ہو گئی اور چار آزاد
سینیٹرز کا تعلق سابق فاٹا سے ہے۔


شیئر کریں: