سینیٹر مشاہد اللہ خان علالت کی وجہ سے انتقال کر گئے

شیئر کریں:

پاکستان مسلم لیگ ن کے دیرینہ رکن سینیٹر مشاہد اللہ خان انتقال کر گئے مرحوم طویل عرصے سے
بیمار تھے۔ سینیٹرمیاں نواز شریف کے بااعتماد ساتھی تھے۔ ملک ایک سئینر سیاست دان اور سینیٹ
ایک مضبوط آواز سے محروم ہو گیا۔

سینیٹر مشاہد اللہ نے 2017 میں پی آئی اے کی تباہی پر بھی کھل کا اظہار کیا تھا۔
سیاسی میدان میں اور عوام کے لئے خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔

مشاہد اللہ خان وہ واحد رہنما تھے جو 99 میں نواز شریف حکومت کے خلاف کراچی میں اپنے چند ساتھیوں
کے ساتھ احتجاج کرنے سڑک پر نکلے تھے۔

سینیٹ میں مشاہد اللہ مسلم لیگ کی بھاری بھرکم آواز رہی ہے انہیں شاعری سے بہت شغف تھا۔
مسلم لیگ کی نائب صدر مریم نواز اور دیگر لیگی رہنماؤں نے انتہائی دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔
ڈپٹی چئیرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا نے مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما سینیٹر مشاہد اللہ خان کے انتقال پر
گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔

دعاوں کا اثر یا کچھ اور؟ کورونا سے شدید علیل مشاہد اللہ اچانک سرگرم

سینیٹر مشاہد اللہ خان کے قریبی ساتھی اور لیگی رہنما محمد مہدی کو بھی شدید صدمہ پہنچا ہے
ان کا کہنا اللہ پاک مرحوم سینیٹر مشاہد اللہ خان کی مغفرت فرمائے اور انکو جنت الفردوس میں جگہ
عطا فرمائے۔ اللہ پاک مرحوم کے اہل خانہ اور رفقاء کو صبر جمیل عطا فرمائے۔

پچھلے کچھ عرصے پہلے ان کی کورونا کی وجہ سے ناسازی طبہ کی تصویر شائع ہوئی تھی جس نے سب ہی کو پریشان کر دیا تھا۔


شیئر کریں: