امریکی صدر جوبائیڈن نے پہلے روز سے ہی ٹرمپ کا گند صاف کرنا شروع کر دیا

شیئر کریں:

امریکا کے نئے صدر جوبائیڈن نے رخصت ہونے والے صدر کا گند بغیر وقت ضائع کیے صاف کرنا شروع کر دیا ہے۔
جوبائیڈن نے کا کہنا ہے کہ ان کے پاس وقت ضائع کرنا کا وقت نہیں وہ جلد ہی تمام متنازع آرڈر منسوخ کر دیں گے۔
جوبائیڈن کو اپنے دور اقتدار میں بڑے بڑے چیلنجز کا سامنا ہے باالخصوص انہوں ایسے موقع پر حلف اٹھایا جب
امریکا کی معیشت کورونا وائرس کی وجہ سے ڈوب چکی ہے۔

عوام میں کورونا سے اموات کا خوف و حراس ہے پہلے ہی چار لاکھ سے زائد امریکی اس وبا سے ہلاک ہو چکے ہیں۔
یہی وجہ ہے کہ انہوں نے پہلے ہی روز ملک بھر میں عوام کے لیے کورونا سے بچاؤ کی خاطر ماسک لگانا لازمی قرار دے دیا ہے۔
جو بائیڈن نے پہلے ہی روز ایگزیکٹیو آرڈر کے ذریعے ایران، لیبیا اور دیگر مسلمان ممالک سمیت شمالی کوریا
پر عائد سفری پابندیاں ختم کر دی ہیں۔

امریکا اور عالمی اداروں کے لیے 3 دن انتہائی اہم قرار دے دیے گئے

اسی طرح ماحولیات کو بچانے کی غرض سے انہوں نے پیرس ڈیکلریشن میں واپس جانے کے معاہدے پر بھی دستخط کر دیے ہیں۔

ایران کے جوہری پروگرام کا کیا ہو گا؟

دنیا کی نظریں اب ایران کے جوہری پروگرام پر ہیں اسرائیل اور عرب ممالک انتہائی باریک بینی سے
نئے صدر کی جانب دیکھ رہے ہیں۔
جوبائیڈن نے پہلے ہی کہہ دیا تھا کہ وہ ایران کے ساتھ جوہری پروگرام کے معاہدہ میں دوبارہ
سے شمولیت اختیار کریں گے۔
سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اقتدار میں آتے ہی پانچ عالمی طاقتوں اور ایران کے درمیان معاہدے
سے علیحدگی کا اعلان کر دیا گیا۔

امریکا سمیت دنیا کے بیشتر ممالک نے اس کی مزمت کی تھی لیکن اسرائیل اور سعودی عرب سمیت کئی عرب
ممالک نے اس کا خیر مقدم کیا تھا۔
اس معاہدہ میں دوبارہ سے شمولیت سے متعلق پہلے ایگزیکٹیو آرڈر میں اسے شامل نہیں کیا گیا۔
ایران سے متعلق معاہدہ پر جلد بین الاقوامی پالیسی پر بات چیت کے دوران نئے صدر کوئی اعلان کر سکتے ہیں۔
خیال رہے امریکی سیینیٹ پہلے ہی معاہدہ میں جانے کی مخالفت کر چکی ہے۔


شیئر کریں: