تحریک لبیک کا فیض آباد دھرنے کے جلد خاتمے کا امکان

FaizAbad Dharna
شیئر کریں:

تحریک لبیک پاکستان کے امیر علامہ خادم حسین رضوی کی جانب سے کچھ دیر میں
فیض آباد دھرنا بعض شرائط کے ساتھ ختم کیے جانے کا اعلان متوقع ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے وفاقی وزیر مذہبی امور نور الحق قادری نے علامہ خادم حسین رضوی
سے مذاکرات کیے ہیں۔

بات چیت میں کچھ یقین دہانیاں کرائی گئی ہیں جس پر علامہ خادم حسین رضوی دھرنے کے
خاتمے کا کسی بھی وقت اعلان سکتے ہیں۔

متنازعہ خاکوں کی مزت میں فرانسیسی سفیر کی اسلام آباد سے بے دخلی کے لیے اتوار کو ریلی
ہر بڑی رکاؤٹ دور کر کے فیض آباد اسلام آباد پہنچی تھی۔

اتوار کو سارا دن مری روڈ میدان جنگ بنا رہا تھا تحریک لبیک کے کارکن اور سیکیورٹی
اہل کاروں کے درمیان راولپنڈی میں تحریک لبیک اور پولیس کے درمیان تصادم، شیلنگ پتھراؤجھڑپیں ہوتی رہیں۔

مظاہرین نے کنٹینرز تک اٹھا کر پھینک دیے تھے اور شیلنگ کے درمیان مظاہرین نے اپنی
ریلی جاری رکھی۔
اسلام آباد میں آج بھی شیلنگ کی گئی لیکن مظاہرین پھر بھی بیٹھے اور انتظامیہ کو ہی
ناکامی کا سامنا کرناپڑا۔

انتظامیہ کی ناکامی کی وجہ سے اسلام آباد اور راولپنڈی کے شہریوں کو مسائل
کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔
موبائل فون سروس، میٹرو بس سروس اور ٹریفک کا نظام تباہ ہونے سے شہری
دو دن سے پریشان ہو رہے ہیں۔

تاہم اب امید ہو چلی ہے کہ دھرنا کسی بھی وقت کر دیا جائے گا۔
اسلام آباد کے شہریوں نے حکومت اور انتظامیہ کے رویے پر بھی افسوس کا اظہار کیا ہے۔
جس کا دل کرتا ہے اسلام آباد کا رخ کر لیتا ہے اور وہ باآسانی حکومت کی رٹ چیلنج کرتے ہیں۔


شیئر کریں: