کراچی پر مبینہ قبضہ اور سندھ تقسیم سازش کے خلاف مظاہرے

شیئر کریں:

کراچی پر مبینہ طور پر وفاق کے قبضے اور سندھ کی تقسیم کی سازش کے خلاف پاکستان پیپلز پارٹی
کی جانب سے کراچی پریس کلب کے باہر احتجاج کیا گیا۔
مظاہرے کی قیادت پی پی پی سندھ کے صدر نثار کھوڑو نے کی۔

احتجاج میں وقار مہدی، راشد ربانی،سعید غنی، جاوید ناگوری، لال چند اکرانی اور
بڑی تعداد میں کارکن شریک ہوئے۔
وزیر تعلیم سندھ سعید غنی کا کہنا ہے کہ کل پھر ایم کیو ایم کے کچھ لوگوں نے
سندھ میں نئے صوبے کا مطالبہ کیا ہے۔

جو لوگ سندھ کو تقسیم کرنے کی بات کر کرہے ہیں وہ سندھ میں نفرتیں پیدا کر رہے ہیں۔
آج بھی ایم کیو ایم کی سیاست اور سوچ الطاف حسین کی سوچ سے بھری ہوئی ہے۔
اگر ایم کیو ایم سندھ کو تقسیم کرنے کی بات کرے گی تو پہر نہ ایم کیو ایم کو مانتے ہیں نہ ایم کیو ایم
کی سیاست کو تسلیم کرتے ہیں۔

پی ٹی آئی کے دو سالہ اقتدار میں عوام کو چکی میں پیس دیا گیا ہے۔
جس جس چیز کا نوٹس وزیراعظم نے لیا ہے وہ چیز عوام کی دسترس سے دور ہوگئی ہے۔
بلدیاتی انتخابات میں سندھ میں کراچی سے کشمور تک کسی کو نشستیں چھیننے نہیں دیں گے۔
اسی طرح سندھ بھر میں بھی وفاقی حکومت کے خلاف مظاہرے کیے جارہے ہیں۔


شیئر کریں: