پشاور میں مریض کو ڈسچارج کرنے پر ڈاکٹر پر تشدد ہاتھ توڑ دیا

شیئر کریں:

پشار سے آفتاب مہمند

پشاور کے پیرا پلیجک سنٹر میں مریض کے ساتھ آنے والے تیمار داروں نے ڈاکٹر کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا۔
ڈاکٹر رمضان پر اتنا تشدد کیا کہ ان کا ہاتھ ہی ٹوٹ گیا۔
ڈاکٹر رمضان کا کہنا ہے مریض ڈسچارج کر دیے جانے کے بعد بھی دو دن سے اسپتال ہی میں تھا۔
لواحقین نے اسپتال سے پکنک اسپاٹ بنا رکھا تھا جانے کا کہا تو بھڑک اٹھے اور تشدد کیا۔

ڈاکٹر کے مطابق مریض پیراپلیجک سنٹر کے چیف ایگزیکٹیو کا رشتہ دار ہے اسی لیے مجھے سسپنڈ بھی کردیا گیا۔
تشدد کی ایف آئی آر درج کروانے کی بجائے مجھے فارغ کردیا گیا۔
ینگ ڈاکٹرز اور پراونشل ڈاکٹرز ایسوسی ایشن نے ڈاکٹر پر تشدد اور ملازمت سے نکالنے کی شدید مزمت کی ہے۔


شیئر کریں: