کورونا سے دنیا کی معیشت تباہ، ایمازون کی دولت مزید بڑھ گئی

شیئر کریں:

کورونا کی عالمی وبا نے دنیا کی معیشت کو تباہی کے دھانے پر پہنچا دیا لیکن وہیں ایمازون
کے سربراہ کی دولت میں مزید اضافہ ہو گیا ہے۔
دنیا کے امیر ترین شخص ایمازون کے سی ای او جیف بیزوس نے دور کورونا میں بھی اپنی دولت بڑھا لی۔
دنیا کی ارب پتی شخصیات کے انڈیکس میں ایمازون کے سربراہ جیف بیزوس کے اثاثوں
کی مالیت 172 بلین ڈالر تک پہنچ گئی۔

ایمازون نے ٹی وی چینل لانے کا فیصلہ کرلیا

دنیا کے امیر ترین شخص نے اپنی دولت میں مزید اضافہ کر کے ریکارڈ اور بہتر بنا لیا ہے۔
گذشتہ سال اس وقت ان کی دولت میں کچھ کمی واقع ہوئی جب25 سال بعد جیف بیزوس
اور اہلیہ میں علیحدگی ہوئی تھی۔

ایمازون نے کورونا وائرس سے بچاو کی جعلی مصنوعات پر پابندی لگا دی

انہیں ایمازون کمپنی کے 4 فیصد شیئرز اہلیہ کو علیحدگی کی صورت میں ادا کرنا پڑے۔
میک کینزی کی دولت نے بھی ایک ریکارڈ اپنے نام کرلیا کینزی کے اثاثوں کی مالیت 57 بلین ڈالر تک پہنچ گئی۔
میک کینزی کا ارب پتی شخصیات کی فہرست میں 12 واں نمبر ہے۔
بیزوس کی زیادہ تر دولت ایمیزون سے منسلک ہے اس کے پاس 57 ملین شیئرز ہیں جس میں 56 فیصد اضافہ ہوا۔
ایمازون کو کورونا کی وبا کے دوران آن لائن شاپنگ میں زبردست اضافے سے زیادہ فائدہ ہوا۔
کورونا کی وبا سے جہاں بڑے اسٹورز بند تھے وہاں ایمازون نے اس سے بھرپور فائدہ اٹھایا۔

بیزوس کی کمپنی کو ملازمین کی حفاظت اور تنخواہ پر تنقید کا سامنا کرنا پڑا لیکن کمپنی کی جانب سے
جون میں فرنٹ لائن کارکنوں کو “شکریہ بونس” کے طور پر500 ملین کی رقم دی گئی تھی۔
فرنٹ لائن کارکنوں کے لئے 2 ڈالر فی گھنٹہ اور ڈبل اوورٹائم دیا جاتا تھا۔


شیئر کریں: