کورونا خطرناک نہیں رہا، امریکی سائنس دانوں نے خوش خبری سنادی

شیئر کریں:

کورونا وائرس کے بارے میں انتہائی مثبت خبر آگئی۔
امریکی سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کا پھیلاو تیز ضرور ہوا ہے لیکن یہ پہلے جتنا خطرناک نہیں رہا۔
امریکی سائنس دانوں نے دنیا بھر میں کورونا وائرس پر تحقیق کی۔
سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ تحقیق میں اس بات کے واضع شواہد ملے ہیں کہ
کورونا پہلے کی نسبت بہت تیزی سے پھیل رہا ہے لیکن یہ پہلے جتنا خطرناک نہیں رہا۔
سہاگ رات راس نہ آئی دلہا صبح چل بسا، 100 باراتی بھی کورونا کا شکار

نئی شکل کے کورونا وائرس میں بڑے پیمانے پر لوگ مبتلا ضرور ہوں گے
لیکن وائرس ان کو شدید بیمار کرنے کی صلاحیت نہیں رکھتا۔
انسٹیٹیوٹ فار امیونٹی اینڈ کورونا وائرس امیونیوتھیرپی کا کہنا ہے کہ
دنیا بھر سے ملنے والے شواہد سے واضع ہوگیا ہے کہ کورونا وائرس سے انسانوں کی زندگی کو کم خطرات ہیں۔
گلگت بلتستان کا اہم علاقہ کورونا فری ہوگیا

موجودہ کورونا وائرس سے اموات کی شرح کم ہوگئی اور بہت کم مریضوں کو اسپتال جانا پڑتا ہے۔
تحقیق میں کہا گیا ہے کہ ابتدا میں کورونا وائرس نے یورپ اور امریکا میں شہریوں کی بڑے پیمانے پر جان لی۔
اب دنیا کے دیگر ممالک میں کورونا کے کیسز کہیں زیادہ ہیں لیکن اموات کی شرح کم ہوگئی ہے۔
سائنس دانوں نے کورونا کی نئی شکل کو G614 کا نام دیا ہے۔
سائنس دانوں کا کہنا کہ موجودہ وائرس کی شکل کم خطرناک ہے۔


شیئر کریں: