پاکستان اسٹیل کے 9ہزار 350 ملازم فارغ

شیئر کریں:

پاکستان اسٹیل کے تمام ملازمین کو فارغ کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔
تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے الیکشن سے پہلے ایک کروڑ بیروز گار افراد
کو ملازمتیں دینے کا وعدہ کیا تھا۔
آج وفاقی کابینہ نے 9 ہزار 350 پاکستان اسٹیل کے ملازمین کو فارغ کرنے کی منظوری دے دی ہے۔
تمام افراد کو ایک ماہ کا نوٹس دیا جائے گا اور پھر اس کے بعد فارغ ہو جائیں گے۔
پاکستان اسٹیل کے ملازمین کیلئے 18 ارب روپے کی منظوری بھی دے دی گئی ہے۔

ای سی سی کے مطابق 250 ملازمین پلان کے تحت کام کرتے رہیں گے۔
فارغ کیے جانے والے فی ملازم کو کم و بیش 23 لاکھ روپے معاوضہ دیا جاۓ گا۔

پاکستان اسٹیل کو عمران خان کی حکومت نے کہا تھا کہ ہم قابل افراد کو اہم عہدوں پر
لگائیں گے لیکن اس کے برخلاف چیزیں سامنے آرہی ہیں۔
جب سے تحریک انصاف کی حکومت برسراقتدار آئی ہے سرکاری اور پرائیویٹ سیکٹر
سے ہزاروں افراد بے روزگار کیے جا چکے ہیں۔
اس دور میں سب سے زیادہ نقصان صحافی برادری کا ہوا ہے۔
الیکٹرانک اور پرنٹ میڈیا سے ہزاروں صحافی بیروز گار ہو چکے ہیں۔
کئی افراد تنخواہوں کی عدم فراہمی کے باعث سیسک سیسک کر دم توڑ چکے ہیں۔
تجزیہ کار مہتاب حیدر کا کہنا ہے کہ تحرک انصاف کے دو سالہ دور حکومت میں
ملک بدترین معاشی صورت حال سے گزر رہا ہے۔
ایک کروڑ افراد کو روزگار دینے کا وعدہ کیا گیا تھا لیکن اس کے برخلاف لوگوں
کو بیروزگار کیا جارہا ہے۔
حکومت کے اس عمل کی کسی بھی صورت کوئی حمایت نہیں کر سکے گا۔


شیئر کریں: