پشاور میں مبینہ مقابلہ عدنان شینواری کی ہلاکت پر دوسرے روز بھی احتجاج

شیئر کریں:

ضلع خیبر لنڈی کوتل میں پشاور ریگی میں گزشتہ روز سی ٹی ڈی کے مبینہ مقابلے میں عدنان شینواری کی ہلاکت پر دوسرے روز بھی احتجاج کا سلسلسہ جاری ہے۔

ضلع لنڈی کوتل کے عوام اور سیاسی جماعتوں کے رہنما بھی متاثرہ خاندان کے ساتھ سراپا احتجاج ہیں۔

مظاہرین گزشتہ روز چروازئے کے مقام پاک افغان شاہراہ پر عدنان کی میت رکھ کر بیٹھ گئے تھے۔

مظاہرین نے عدنان شنواری کے واقعہ کی آزادانہ انکوائری اور متاثرہ خاندان کو انصاف فراہم کرنے کی اپیل کی ہے۔

انہوں نے مطالبات کی منظوری تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

پاک افغان شاہراہ ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند رہے گی اور تمام مطالبات تسلیم ہونے تک احتجاج جاری رہے گا۔

احتجاج اور دھرنے کے موقع پر سیاسی جماعتوں کے قائدین اور عوام بڑی تعداد میں موجود رہے۔

پاک افغان شاہراہ دونوں اطراف سے بند ہونے کی وجہ سے سیکڑوں مال بردار گاڑیاں پھنس گئی ہیں۔

یاد رہے گزشتہ روز سیکیورٹی اداروں نے مقابلے میں پانچ دہشت گردوں کو ہلاک کرنے کا دعوی کیا تھا۔


شیئر کریں: