ٹک ٹاک کا جنون 11 سالہ بچے کی جان لے گیا

شیئر کریں:

بہاولنگر میں ٹک ٹاک کے جنون نے گیارہ سالہ بچے کی جان لے لی۔

نواحی گاؤں 137سیکس آر میں گیارہ سالہ عابد علی نامی بچہ قتل ہو گیا ۔

عابد علی نامی بچہ کو نعیم نامی سولہ سالہ لڑکے نے فائر مار کر قتل کر دیا۔

پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ دونوں لڑکے پسٹل سے ٹک ٹاک بنا رہے تھے کہ فائر ہو گیا جس سے عابد موقع پر جاں بحق ہو گیا۔

پولیس تھانی فقیروالی نے ملزم نعیم کو حراست میں لے لیا ہے ۔

یاد رہے کہ اس سے قبل پاکستان میں ٹک ٹاک کا جنون بہت سی جانیں لے چکا ہے ۔رواں سال جنوری میں سیالکوٹ میں ٹک ٹاک کے شوقین لڑکے نے ٹک ٹاک اسٹار بننے کے شوق میں دوست پر گولی چلا دی تھی اور دوست موقع پر جاں بحق ہو گیا تھا ۔

ٹک ٹاک سب سے زیادہ تیزی سے ڈاون لوڈ کی جانے والی ایپ بن چکی ہے ۔

ایک ایپلی کیشن ایک ارب سے زیادہ ڈاون لوڈ ہو چکی ہے اور پچاس کروڈ لوگ ٹک ٹاک پر مستقل ویڈیوز بنا رہے ہیں ۔

جن ممالک میں ٹک ٹاک زیادہ استعمال ہوتا ہے ان میں پاکستان کا پانچواں نمبر ہے جب کہ بھارت نمبر ایک پر ہے ۔

دوسرے نمبر پر امریکا ،تیسرے نمبر پر ترکی چوتھے نمبر پر روس ہے ۔


شیئر کریں: