کراچی کا مبینہ لینڈ گریبر “علی حسن بروہی”گرفتار

Ali Hassan Brohi
شیئر کریں:

کراچی میں زمینوں پر بڑے پیمانے پر قبضہ کرنے کے واقعات عام ہیں۔

شہر بھر کے رفاعی پلاٹس ، مافیا پلاٹنگ کر کے بیچتی رہی ہے۔

سپریم کورٹ کی جانب سے نوٹس لینے کے بعد سے سب کی توجہ اس طرف متوجہ ہوئی ہے۔

کراچی پولیس نے شہر میں لینڈ گریبنگ کے مبینہ سرغنہ علی حسن بروہی کو گرفتار کر لیا ہے۔

کراچی پولیس کے مطابق زمینوں پر قبضوں کے لیے مشہور لینڈ گریبر علی حسن بروہی کو اسکیم 33 کے علاقے سے اسلحہ سمیت گرفتار کیا گیا ہے۔

کراچی پولیس کے مطابق بروہی گڈاپ، منگھوپیر اور اسکیم 33 میں سیکڑوں ایکڑ سرکاری زمینوں پر قبضہ میں ملوث ہے۔

کراچی پولیس ذرائع کہتے ہیں بروہی نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر سپر ہائی وے پر پیٹرول پمپ کے قریب زمین پر قبضہ کررکھا تھا۔

علی حسن بروہی کی پولیس سے تلخ کلامی ہوئی، اس دوران ایس ایچ او سہراب گوٹھ پر مبینہ تشدد بھی کیا گیا۔

علی حسن بروہی کے خلاف ڈپٹی کمشنر ویسٹ نے سرکاری زمینوں پر قبضے کی رپورٹ بھی حکومت سندھ کو بھیجی تھی۔ بروہی کی گرفتاری کو مافیا کے خلاف بڑی کامیابی قرار دیا جارہا ہے۔


شیئر کریں: