پشاور یونیورسٹی مالی بحران کا شکار،ٹیچرز اور عملے کو تنخواہیں نہیں ملیں گی

شیئر کریں:

جامعہ پشاور کا دیوالیہ نکل گیا ، شدید مالی بحران کا شکار ادارے کی انتظامیہ نے فنڈز کی کمی کے باعث ملازمین کو تنخواہ اور پنشن دینے سے معذرت کرلی ہے۔
وائس چانسلر کے وزیراعلی کو لکھے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ جامعہ کو فنڈز کی شدید کمی لاحق ہے۔
http://www.khabarwalay.com/2019/12/04/12545/
بارہا حکومت اور محکمہ تعلیم کوآگاہ کیا گیا مگر کوئی شنوائی نہیں ہوئی۔
لہذا ہنگامی بنیادپر 200 ملین جاری کئے جائیں تاکہ اگلے مہینے سے ملازمین کو تنخواہوں کی ادائیگی ممکن ہو۔
اس ماہ وائس چانسلر سے لیکر چوکیدار کی تنخواہ تک میں دس سے بیس فیصد کی کٹوتی کی جائے گی۔
وائس چانسلر کے مطابق مالی بحران یونیورسٹی بجٹ میں 350 ملین کے کٹ لگنے کے باعث پیش آیا ہے۔
دوسری جانب ٹیچرز ایسویسی پیوٹا نے بھی جامعہ کو بحران سے نکالنے کے لیے یونیورسٹی سے فوری بیل آوٹ پیکج کا مطالبہ کر دیا ہے ۔


شیئر کریں: