January 16, 2020 at 1:12 pm

کراچی میں بدنامی کے ڈر سے طالب علم نے استانی کو قتل کر دیا۔شاطر کم عمر ملزم کی قتل کی واردات کو ڈکیتی کا رنگ دینے کی کوشش پولیس نے ناکام بنا دی۔گرفتار ملزم نے حقائق اگل دیے۔
کراچی میں درندگی کی ایک اور واردات۔۔۔
طالب علم کے ہاتھوں استانی قتل ہو گئی۔۔۔
سرجانی انوسٹیگیشن پولیس نے دس دن میں اندھے قتل کا کیس حل کرلیا۔۔۔۔
مقتولہ خاتون کی گلا کٹی لاش پانچ جنوری کو سیکٹر 36 بی سے ملی تھی۔۔۔۔
معمہ حل ہوگیا انیس سالہ لڑکے نے حوس میں اپنی ٹیوشن ٹیچر کا قتل کرڈالا ،،،شاطر کم عمر ملزم نے قتل کرنے کے بعد واقعہ کو ڈکیتی کا روپ دینے کی کوشش کی ۔
ملزم محسن سلیم نے قتل کرنے کے بعد مقتولہ کا موبائل اور پرس چوری کیا،، ملزم محسن مقتولہ کا پڑوسی اور ٹیوشن پڑھنے آتا تھا پولیس نے انیس سالہ ملزم محسن سلیم کو گرفتار کرلیا ،،ملزم محسن وقوع کے روز بھی اپنے بہن بھائیوں کی ساتھ گھر آیا تھا اور چاے پی تھی، واقعے والے دن یاسیمن کا شوہر اور بچے گھر پر نہیں تھے ، کم عمر ملزم نے یاسمین سے زبردستی کرنے کی کوشش کی تو یاسمین نے محلے اور اسکی ماں کو بتانے کی دھمکی دی ، ملزم نے پولیس کو اپنے بیان میں بتایا کہ بدنامی کے ڈر سے اس نے چھری کے وار سے یاسمین کا گلہ کاٹ دیا۔۔۔ پولیس نے ملزم کو گرفتار کرکے آلہ قتل بھی برآمد کرلیا۔

Facebook Comments