کرکٹ ٹیسٹ 5 کے بجائے 4 روز کا ہوگا؟

شیئر کریں:

بیٹ اور بال کا کھیل کرکٹ دور
حاظر کی تبدیلیوں سے مسلسل
متاثر ہو رہا ہے۔

قدیم ترین کھیل کو اس کی اصل
حالت اور شکل سے محروم کیا جارہا
ہے۔ کرکٹ اور بڑے کرکٹر کی شناخت
اور پہچان پانچ روزہ ٹیسٹ میچ سے
ہوا کرتی تھی۔

اب ٹیسٹ کو بھی پانچ روز سے گھٹا
کر چار روز تک محدود کرنے پر غور
شروع کر دیا گیا ہے۔

توقع کی جارہی ہے اگلی ٹیسٹ
چیمپئین شپ پانچ کے بجائے
چار روزہ ٹیسٹ میچ کی ہوگی۔

شائقین کرکٹ کی مصروفیات کو
مدنظر رکھتے ہوئے آئندہ ٹیسٹ
میچ جمعرات سے شروع ہو کر اتوار
کو مکمل ہوا کرے گا۔

ٹیسٹ میچ کو چار روز تک محدود
کرنے کا نظریہ اس طرح پروان
چڑھا کہ پچھلے چند سال کے
دوران بیشتر ٹیسٹ میچ چار روز
کے اندر ہی سمٹنے لگے تھے۔

بعض اوقات تین روز میں بھی
ٹیسٹ ختم ہوئے۔ دور جدید میں
زیادہ تر ٹیسٹ نتیجہ خیز ہی
ہوتے ہیں اس کے برخلاف ماضی
میں کرکٹ بہت سلو ہونے کی وجہ
سے مسلسل کئی ٹیسٹ سیریز کا
کوئی نتیجہ ہی نہیں نکلتا تھا۔

ون ڈے کرکٹ کی شکل عرصہ پہلے
ہی تبدیل کر دی گئی تھی۔ پہلے
ون ڈے انٹرنیشنل کی ایک اننگنز
60 اوورز پر مشتمل ہوتی تھی۔

پہلے مرحلے میں اسے 50 اوورز
تک محدود کیا اور پھر بلے بازوں
کی دہشت گردی کے لیے 20 ٹوئنٹی
متعارف کرادی گئی۔

جدید دور کی کرکٹ کی مشہوری
کا عالم یہ ہے کہ جن ملکوں کی
انٹرنیشنل کرکٹ ٹیمیں بھی نہیں
ہیں وہاں 20 ٹوئنٹی کے ٹورنامنٹس
کرائے جارہے ہیں۔

کس طرح سائنس ترقی کر رہی
ہے اس سے لگتا یہی ہے کہ جلد
ہی 20 ٹوئنٹی کرکٹ کا بھی متبادل
ہمارے سامنے آجائے گا۔


شیئر کریں: