پاکستان میں غیرملکی سرمایہ کاری بڑھ گئی ‬

شیئر کریں:

پاکستان میں غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ ہو گیا۔ رواں مالی سال صنعتی شعبے میں غیر ملکی سرمایہ کاری میں 239 فیصد اضافہ دیکھا گیا۔ غیر ملکیوں کی طرف سے حکومتی بلز اور بانڈز میں سرمایہ کاری بھی بڑھ گئی۔اسٹیٹ بینک کے مطابق مالی سال کے پہلے چار ماہ کے دوران  صنعتی شعبے میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حقیقی حجم 65 کروڑ ڈالر رہا جو گزشتہ مالی سال اس عرصے سے 45 کروڑ 81 لاکھ ڈالر زیادہ ہے۔ اس دوران اسٹاک مارکیٹ میں بیرونی سرمایہ کاری کے حجم میں ایک کروڑ 56 لاکھ ڈالر کا اضافہ دیکھا گیا۔ حکومتی بانڈز اور ٹرثری بلز میں غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم 43 کروڑ 67 لاکھ ڈالر رہا،، جس کے باعث چار ماہ کے دوران مجموعی غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم ایک ارب 10 کروڑ 24 لاکھ ڈالر رہا،، جو گزشتہ مالی سال مجموعی طور پر غیر ملکی سرمایہ کاری سے 7 کروڑ 75 لاکھ ڈالر کا انخلا رکارڈ کیا گیا تھا،، اقتصادی ماہرین کے مطابق صنعتی شعبے کی سرمایہ کاری میں ٹیلی کام کمپنی کی طرف سے لائسنس کی تجدید کی تقریبا 26 کروڑ دالر کی فیس بھی شامل ہے۔ٹریژری بلز اور پاکستان انوسٹمنٹ بانڈز میں سرمایہ کاری شرح سود خطے میں سب سے زیادہ ہونے کی وجہ سے ہو رہی ہے،، سرمایہ کاروں کو عالمی بانڈ مارکیٹ میں اوسطا شرح منافع کے مقابلے میں تین سے چار گنا زیادہ منافع مل رہا ہے۔


شیئر کریں: