October 12, 2019 at 9:50 am

مالی سال کے پہلے چودہ ہفتوں کے دوران حکومت نے بجٹ اخراجات کے لیے کمرشل بینکوں سے ایک ہزار سات سو اکتیس ارب روپے قرض لیا۔ اسٹیٹ بینک کے مطابق جولائی سے اکتوبر کے پہلے ہفتے کے اختتام تک وفاق نے پرانے قرضوں کی واپسی اور دوسرے اخراجات کے لیے کمرشل بینکوں سے مجموعی طور پر 17 کھرب 30 ارب 86 کروڑ روپے کے قرضے لیے۔ حکومتی قرضوں کے باعث بینکنگ سیکٹر میں مسلسل سرمائے کی قلت ہی رہی۔ جس کے باعث بینکوں نے اس دوران نجی شعبے کو نئے قرضے دینے کی بجائے پرانے قرضوں کی وصولی پر زور دیا۔ چودہ ہفتوں کے دوران نجی شعبے نے کمرشل بینکوں کو تقریبا 50 ارب روپے واپس کیے۔ گزشتہ مالی سال اس عرصے میں نجی شعبے کی طرف سے بینکوں سے مجموعی طور پر 113 ارب 9 کروڑ روپے کے نئے قرض لیے گئے تھے۔ماہرین کے مطابق صنعتی اور کاروباری سرگرمیاں سست ہونے کی وجہ سے بھی اس سال نجی شعبے کی طرف سے نیا قرض نہیں لیا جا رہا۔

Facebook Comments