September 18, 2019 at 12:42 am

روس کے صدر ولادیمیر پیوٹن نے انقرہ میں ایران اور ترک ہم منصب کی موجودگی میں یمن جنگ کے خاتمے کی اپیل کردی۔ قران کریم کی سورہ آل عمران کی ایک سو تین ویں آیت دہراتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اللہ کے اس احسان کو یاد کرو جب تم آپس میں دشمن تھے تو اس نے تمہارے دلوں کے مابین الفت بھردی تو تم اس کی نعمت کے ساتھ بھائی بھائی ہوگئے۔ ایرانی صدر حسن روحانی اور ترک صدر رجب طیب اردگان اس موقع پر روسی صدر کو حسرت بھری نگاہوں سے دیکھتے رہے۔ صدر پیوٹن نے از راہ تفنن سعودی عرب کو اپنے دفاع میں زور آزمائی کا جائزطریقہ سمجھانے کے لئے بھی ایک اور قرآنی مثال دی۔ پیوٹن نے مذاقاً کہا کہ سعودی عرب بھی ایران اور ترکی کی طرح روس کا فضائی اور دفاعی نظام خریدلے۔ روسی ٹی وی کے مطابق ایران اور ترکی کے صدور نے سعودی قیادت میں لڑی جانے والی یمن جنگ پر شدید تنقید بھی کی۔ تینوں صدور نے یمن جنگ کے خاتمے پر تاکید کی۔ اس جنگ میں بڑے پیمانے پر قیمتی جانوں کا نقصان ہو چکا ہے۔ آتحادی فوج کی بمباری سے سب سے زیادہ بچے متاثر ہو رہے ہیں۔

Facebook Comments