September 5, 2019 at 12:40 pm

واٹس ایپ پر دوستی اور محبت کا بھیانک انجام۔تین ماہ قبل کراچی کے علاقے کریم آباد کی کچرا کنڈی سے ملنے والی جھلسی ہوئی لاش کا معمہ حل ہوگیا۔لڑکا سعودی عرب سے محبت کی خاطر کراچی آیا تھا۔نوجوان کے قتل میں اسی کی محبوبہ ملوث نکلی۔کراچی میں کریم آباد کی کچرا کنڈی سے 3ماہ قبل ملنےوالی جھلسی ہوئی لاش کا معمہ حل ہوگیا۔قاتل حسینہ شبانہ نے محبت کے جال میں پھنسا کر 27سالہ حمزہ کو سعودی عرب سے کراچی بلایا تھا۔۔۔حمزہ کو کیا خبر تھی کہ شبانہ اس کی زندگی کا ہی خاتمہ کردے گی۔تحقیقات میں سامنے آیا کہ شبانہ نے 26 رمضان کوحمزہ کو سعودیہ سےکراچی بلایااور لیاقت آباد میں کرائے کا گھر لیا۔جہاں شبانہ بھی چار دن مقیم رہی۔پیسوں کی لالچ میں ملزمہ نےعیدالفطر کی چاند رات کو حمزہ کونیند کی گولیاں کھلائیں۔اور گلے میں پھندا ڈال کر موت کے گھاٹ اتارا۔واردات کے بعدملزمہ نے اپنے پرانے ساتھی وگینگ وار کارندے خلیل کو بلایا۔جو لیاقت آباد میں شیلٹر ہوم چلاتا ہے۔خلیل ایمبولینس لایاجس میں لاش ڈال کر کچرا کنڈی میں پھینکی گئی،
عید کے روز لاش کچرے میں پڑی رہی جس پر دوسرے دن ملزمان نے پیٹرول چھڑک کرآگ لگائی۔تحقیقاتی اداروں نےملیر جعفر طیار سوسائٹی میں چھاپہ مار کرملزمہ شبانہ اور گینگ وار کارندے خلیل کو گرفتار کیا
تو دونوں نے اعتراف جرم کرلیا۔۔

Facebook Comments