August 20, 2019 at 9:39 am

سائز میں انتہائی چھوٹا ،، لیکن مچھر اگر کاٹ لے تو انسان جان لیوا امراض کا شکار ہو سکتا ہے ،،، اٹھارہ سو ستانوے میں ایک برطانوی ڈاکٹر سر رونلڈ روز نے بیس اگست کو دریافت کیا تھا کہ مادہ مچھر انسانوں میں ملیریا پیدا کرنے کی ذمہ دار ہوتی ہیں۔ اس دن کے بعد سے دنیا بھر میں مچھروں سے بچاؤ کا عالمی دن منایا جانے لگا۔
مچھر نہ صرف ملیریا بلکہ ڈینگی، چکن گونیا، اور زیکا وائرس جیسے امراض کا سبب بنتا ہے ،، عالمی ادارہ صحٹ کے مطابق اس چھوٹے سے جاندار کے کاٹے سے ہس رال دس لاکھ سے زائد افراد موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔طبی ماہرین کے مطابق ڈینگی اور ملیریا کےمچھروں کی افزائش اپریل سے اکتوبر تک زیادہ ہو تی ہے۔ گھر، گلی اور محلوں کوصاف ستھرا رکھنے، مچھر مار اسپرے اور احتیاطی تدابیر سے ملیریا اور ڈینگی کے مرض سے بچا جا سکتا ہے۔

Facebook Comments