یہ چائے نہیں پیزا کا دور ہے

شیئر کریں:

سوشل میڈیا پر ایک بار پیزا کا شور سنائی دینے لگا
ٹویٹر پر #چائےنہیںپیزا ٹرینڈ کر رہا ہے
انٹرنیٹ صارفین اس ٹرینڈ میں حکومت اور فوج کو تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں
ماجرہ کچھ یوں ہے کہ گزشتہ روز ڈی جی آئی ایس پی آر کی پریس کانفرنس ہوئی
کانفرنس میں ایک صحافی نے سوال کیا کہ مولانا فضل الرحمن نے
راولپنڈی یعنی جی ایچ کیو کی طرف مارچ کا اعلان کیا ہے اس پر آپ کیا کہیں گے۔
پاک فوج کے ترجمان میجز جنرل بابر افتخار نے کہا کہ
اپوزیشن جی ایچ کیو شوق سے آئے ہم انہیں چائے پانی پلائیں گے۔

پاکستان میں صحافت پر اندرونی حملے “رو لفافے رو” بھی ٹرینڈ بن گیا

اس بیان پر سربراہ اپوزیشن اتحاد مولانا فضل الرحمن نے بھی در عمل دیا۔
مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ خود پیزا کھائیں اور
ہمیں چائے پر ٹرخائیں یہ مہمانوازی کے اصولوں کے خلاف ہے۔
مولانا فضل الرحمن کے بیان کے بعد سوشل میڈیا صارفین نے
ترجمان پاک فوج کے پیان پر تنقید کرنا شروع کردی۔
صارفین کا کہنا ہے کہ فوج کے ترجمان کو سیاسی بیان نہیں دینا چاہیے تھا۔
ڈی آئی ایس پی آر کے بیان اور اس پر مولانا فضل الرحمن کے درعمل کے بعد چائے نہیں پیزا سوشل میڈیا پر ٹاپ ٹرینڈ ہے۔


شیئر کریں: