کورونا وائرس کی تعداد میں اضافہ، بڑے اجتماعات پر پابندی اور مزید سختیاں ہوں گی

شیئر کریں:

کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے شکار کی وجہ سے ملک بھر میں بڑے بڑے اجتماعات پر پابندی لگانے
کی تجوویز دے دی گئی ہے۔
این سی او سی کے اجلاس مین وبا کے مزید سنگین ہونے کے پیش نظر مزید سختیاں بھی حکومت
کو تجویز کی ہیں۔
وفاقی وزیر منصوبہ بندی اور ترقی اسد عمر کی زیر صدارت این سی او سی کا پنڈی میں اجلاس ہوا۔
اجلاس میں کورونا وائرس کی دوسری لہر کے پیش نظر مختلف تجاویز زیر غور لائی گئیں۔
بارہ اکتوبر کے بعد کورونا وائرس کے کیسوں میں تیزی سے اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے۔

این سی او سی نے فیصلہ کیا کہ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدارت صوبائی وزیر تعلیم کا
اجلاس ہوگا جس میں موجودہ صورت حال پر غور کیا جائے گا۔

یہ اجلاس انتہائی اہمیت کا حامل ہو گا جس میں تعلیمی ادارے کھلے رکھنے یا بند رکھنے سے متعلق
فیصلہ کیا جائے گا۔
پانچ سے زائد افراد کے مزہبی ، سیاسی ، سماجی، ثقافتی یا کسی بھی نوعیت کے اجتماع پر پابندی ہونی چاہیے۔
سینما، تھیٹر اور مزارات فوری طور پر بند کردینے چاہئیں۔
خیال رہے حکومت نے پہلے ہی بغیر ماسک عوامی مقامات پر پابندی لگا رکھی ہے اور خلاف ورزی پر
پانچ سو روپے جرمانہ کا اعلان کیا جا چکا ہے


شیئر کریں: