کوئٹہ کا حاجی بچوں کی سنچری کا خواہش مند

شیئر کریں:

کہتے ہیں بچے دو ہی اچھے اور اس بدترین مہنگائی کے دور میں شادی کے بغیر گزارا مشکل ہو چکا ہے۔ اسی معاشرے میں ایسے بھی افراد ہیں جو اپنے بچوں کی سنچری کرنا چاہتے ہیں۔ آئیے ایسے باہمت شخص سے آپ کو ملواتے ہیں۔
بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ سے تعلق رکھنے والے 60 بچوں کے والد نے بچوں کی ویڈیو بنانے اور انٹرویو دینے کیلئے میڈیا کے نمائندوں سے رقم، راشن اور زندہ دنبہ دینے جیسے مطالبات رکھ دئیے۔
سال نو کی آمد پر یکم جنوری کو سردار حاجی جان محمد خان نے دعویٰ کیا کہ اتوار کو ان کے ہاں ساٹھویں بچے کی پیدائش ہوئی ہے جسکے بعد میڈیا کا 60 بچوں کے باپ سے رابطوں کا تانتا بندھ گیا۔ انٹرویو کو میڈیا کی ضرورت سمجھتے ہوئے جان محمد نے کسی چینل سے 50 ہزار ایک لاکھ تک رقم کا مطالبہ کیا تو کسی نمائندے سے بچوں اور بیگمات کے کپڑوں کی فرمائش کر ڈالی یہاں بات نہ بنی تو زندہ دنبہ مانگنے کے بعد 60 بچوں کیلئے راشن ڈلوانے کی بات کرتے ہوئے میڈیا کو نصحیت بھی کردی کے کسی کے گھر خالی ہاتھ نہیں جاتے جان محمد پیشے کے اعتبار سے میڈیکل پریکٹیشنر ہیں انکے مطابق پانچ بچے اللہ کو پیارے ہوئے ہیں اور ابھی 55 حیات ہیں۔ معاملہ یہاں رکا نہیں آنیوالے چند مہینوں میں انکے ہاں مزید 2 بچوں کی پیدائش متوقع ہے۔ سردار حاجی جان پوری سنچری یعنی 100 بچوں کے باپ بننے کی خواہش رکھتے ہیں جسکے لیے وہ چوتھی شادی کیلئے بھی کوشاں ہیں۔ جان محمد کہتےہیں کہ ان کی تین بیگمات بچوں کی پیدائش پر خوش ہیں۔
خبر والے حاجی صاحب کی پیسوں والی خواہش پوری نہیں سکتے تھے اسی لیے ہم نے تصویروں اعر اسکرپٹ کا سہارا لیا امید ہے آپ نے برا نہیں منایا ہوگا۔


شیئر کریں: