چین اور ایران کے بعد آسٹریلیا میں کورونا کی دوسری لہر،دوبارہ لاک ڈاؤن

شیئر کریں:

چین اور ایران کے بعد آسٹریلیا میں بھی کورونا وائرس کی دوسری لہر پہنچ گئی۔
میلبورن میں 6 ہفتوں کے لئے دوبارہ لاک ڈاؤن نافذ کر دیا گیا ہے۔
شہریوں نے دوسرے لاک ڈاؤن کے نفاذ پر افسوس اور ناپسندیدگی کا اظہار کیا ہے۔

چھوٹے کاروباری افراد نے خدشے کا اظہار کرتے ہوئے سوال اٹھایا کہ کیا وہ اس لاک ڈاؤن
کے باعث اپنا کاروبار بچا بھی پائیں گے۔

آسٹریلوی وزیر اعظم نے دوبارہ لاک ڈاؤن کرتے ہوئے کہا کہ یہ عوام کا امتحان لے گا لیکن
ایک مرتبہ پہلے بھی ایسا کر چکے ہیں۔

امید ہے اس بار بھی وائرس کو شکست دینے میں کامیاب ہوں گے۔
انہوں نے چھوٹے کاروباری افراد کا حوصلہ بڑھایا کہ قوم آپ کے ساتھ ہے حکومت بھی
مشکل کی گھڑی میں ساتھ دے گی۔
آسٹریلوی ریاست وکٹوریا نے دیگر ملک سے “خود ساختہ تنہائی اختیار” کر لی ہے وہاں حال ہی
میں چند افراد میں وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔

وکٹوریا کے سربراہ کا ڈینیئل اینڈریو نے نئی پابندیوں پر معافی مانگتے ہوئے کہا کہ
اس کے علاوہ کوئی حل نہیں تھا۔

انہوں نے ریاست میں 134 نئے متاثرین کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت
مجموعی طور پر 860 افراد وائرس سے متاثر ہیں۔


شیئر کریں: