پی ٹی آئی حکومت نے نوٹ چھاپنے کا اپنا ہی ریکارڈ توڑ دیا

شیئر کریں:

حکومت نے نئے نوٹ چھاپنے کا کا بھی نیا ریکارڈ بنا دیا نو ہفتوں کے دوران 846 ارب روپے کے نئے نوٹ جاری کیے گئے۔
ملک میں زیر گردش نوٹوں کی مالیت ملکی تاریخ میں پہلی بار 67 کھرب روپے سے بھی تجاوز کر گئی۔
کرونا کی وجہ غریبوں میں رقوم کی تقسیم اور دوسرے حکومتی اخراجات میں اضافہ ہوا تو حکومت نے نئے نوٹ چھاپنے شروع کر دئیے۔
گندم کی خریداری اور ٹیکس ری فنڈ کو نکال کے حکومت نے عوام کے لیے جتنی رقم کے ریلیف پیکج کا اعلان کیا تھااس سے زیادہ مالیت کے نوٹ چھاپ لیے۔
اسٹیٹ بینک کے مطابق مئی کے تیسرے ہفتے کے دوران مزید 185 ارب 10 کروڑ روپے مالیت کے نئے نوٹ جاری کیے گئے۔
پاکستان میں کرونا کی وبا پھیلنے کے بعد صرف نو ہفتوں کے دوران حکومت کی طرف سے مجموعی طور پر 845 ارب 88 کروڑ 71 لاکھ روپے مالیت کے نئے نوٹ جاری کیے جا چکے ہیں۔
جس کے باعث اس دوران ملک میں زیر گردش نوٹوں کی مجموعی مالیت 67 کھرب 2 ارب 85 کروڑ 44 لاکھ روپے کی رکارڈ سطح پر پہنچ گئی۔
رواں مالی سال کے دوران اب تک 1 ہزار 384 ارب روپے مالیت کے نئے نوٹ جاری کیے جا چکے ہیں
جو گزشتہ سال سے 107 فیصد زیادہ ہیں۔
اقتصادی ماہرین کا کہنا ہے کہ ملک میں مہنگائی کی ایک بڑی وجہ نئے نوٹوں کا اجرا بھی ہے۔


شیئر کریں: