پاکستان میں کورونا ویکسین ٹرائل سے روک دیا گیا پروفیسر کے خلاف کارروائی کا امکان

شیئر کریں:

ہیلتھ سائنسز یونیورسٹی کو کورونا ویکسین ٹرائل سے روک دیا گیا ہے۔
ڈریپ کے ڈائریکٹر فارمیسی سروسز نے منظوری کے بغیر حفاظتی ویکسین کا ٹرائل
کرنے پر وائس چانسلر سے وضاحت طلب کر لی۔
بائیو اسٹڈی قانون 2017 کے تحت ملک میں کوئی دوائی اور ویکسین تیاری کیلئے
کلینیکل ٹرائل کیلئے ڈریپ کی کلینیکل ٹرائل اسٹڈی کمیٹی سے اجازت لینا ضروری ہے۔
الزام ثابت ہونے کی صورت میں وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم سمیت حکام ک
ے خلاف کارروائی کی جائے گی۔
چیئرمین کلینیکل اسٹڈی کمیٹی ڈاکٹر عبدالرشید نے پروفیسر جاوید اکرم کو ویکسین
تیاری اورکلینیکل ٹرائل روکنے کی ہدایت کردی ہے۔


شیئر کریں: