پاکستان بھر میں تعلیمی ادارے 15 ستمبر سے کھولنے کا فیصلہ

شیئر کریں:

کورونا وائرس کی وجہ سے معطل معمولات زندگی بحال کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔
ملک بھر میں بند کیے گئے تعلیمی ادارے 15 ستمبر سے کھولے جارہے ہیں۔
کھانے پینے کے مقامات ہوٹل بھی 10 اگست سے کھول دیے جائیں گے۔
اسی طرح شادی ہال اور دکانیں‌کھلونے بند کرنے کے اوقعات کار معمولات پر آجائیں گے۔

این سی او سی کی کورونا مریضوں کا اضافہ روکنے کے لیے بیداری مہم

چودہ اگست یعنی یوم آزادی کے موقع پر بھی ہمیں انتہائی احتیاط کے ساتھ منانی ہو گی۔
پاکستان بھر میں مزارات بھی کھولے جارہے ہیں اس کی بنیادی زمہ داری صوبائی حکومتوں پر عائد ہو گی۔
وفاقی وزیر اسد عمر کا کہنا ہے کہ محرم الحرام میں بہت زیادہ احتیاط سے کام لینا ہو گا۔
اسد عمر نے دعوی کیا کہ پاکستان میں کورونا وائرس سے بچاؤ کے اقدامات پر دنیا معترف ہے۔
عوام کو اپنے معمولات زندگی میں خود سے احتیاطی تبدابیر اختیار کرنی ہوں گی۔
ذرائع کے مطابق حکومت نے ہرٹ ایمونٹی پر جانے کا پہلے ہی سے فیصلہ کر لیا تھا۔
کورونا وائرس کی وجہ سے زندگی کے ہر شعبہ میں پابندیاں عائد کی گئی تھیں۔
پابندیوں کی وجہ سے کاروبار بھی تباہ ہو گیا تھا لیکن اب 8 اگست سے مرحلہ وار زندگی معمول پر آجائے گی۔


شیئر کریں: