ناک کے ذریعے کورونا ٹیسٹ نے بچے کی جان لے لی

شیئر کریں:

کورونا وائرس کی ٹیسٹنگ پر پہلے ہی سوالات اٹھائے جارہے تھے اب ٹیسٹنگ کٹس جانیں بھی لینے لگیں۔
سعودی عرب میں ٹیسٹنگ کے دوران مسیحاؤں کی بے حسی نے والدین کی گود اُجاڑ دی۔
رپورٹس کے مطابق بچے کے اہل خانہ درجہ حرارت بڑھ جانے پر طبی معائنے کے لیے بچے کو اسپتال لائے۔
طبی عملے نے کورونا وائرس کے شبہ میں ٹیسٹ کے لیے کٹ بچے کی ناک میں داخل کی جو اندر ہی ٹوٹ گئی۔
ڈاکٹرز نے بچے کو داخل کر لیا اور آپریشن کے لیے بے ہوش کردیا گیا۔

پاکستان میں 2 ماہ کے دوران کورونا پر قابو پانے کی خوش خبری

والدین کو تسلیاں دیتے رہے کہ آپریشن مکمل ہو گیا اورناک سے کورونا ٹیسٹ کی کٹ نکال لی گئی۔
اسپتال میں موجود ممتا لخت جگر کی حالت دیکھ کر دہائیاں دیتی رہی لیکن اسپتال کے عملے نے صرف تسلیاں دے کر کام چلایا۔
صبح بچہ اچانک بے ہوش ہوا ماں نے فوری طور پر نرسوں کو اطلاع دی۔
سانس آنا بند ہونے پر مصنوعی تنفس فراہم کیا گیا حالت خراب ہونے پر ڈاکٹرز کو بلایا گیا۔

روس دنیا کی پہلی کورونا ویکسین بنانے میں کامیاب

ایکسرے میں پتا چلا کہ بچے کے ایک پھیپھڑے میں تنفس کی نالی بند نظر آرہی ہے۔
حالت مزید بگڑنے پر اسے ریاض کے اسپیشلسٹ اسپتال منتقل کرنے کی درخواست کی گئی۔
تاخیر سے منظوری دی گئی اور ایمبولینس کے انتظار میں بچہ زندگی کی بازی ہار گیا۔


شیئر کریں: