متنازع بھارتی اینکر ارناب گوسوامی گرفتار

شیئر کریں:

ممبئی پولیس نے بھارتی نیوز اینکر ارناب گوسوامی کو گرفتار کرلیا۔
گوسوامی کو ان کی رہائش گاہ وورلی ہاؤس سے ایک خودکشی سے متعلق کیس میں گرفتار کیا گیا ہے،
ارناب گوسوامی کے ساتھ دیگر 2 افراد کو بھی گرفتار کیا گیا ہے جن میں فیروز شیخ اور نتیش سردا شامل ہیں۔

arnab goswami arrested, Khabarwalay.com

ایک آرکیٹیک فرم کے مینیجنگ ڈائریکٹر 53 سالہ انوے نائیک اور ان کی والدہ نے 2018 میں خودکشی کی تھی
اس حوالے سے خبریں سامنے آئی تھیں کہ چینل کو انوے نائیک کو 83 لاکھ روپے ادا کرنا تھے
جب کہ دیگر دو کمپنیوں نے بھی آکیٹیک ڈیزائنر کو رقم کی ادائیگی نہیں کی تھی
اور تینوں کی رقم ملا کر 5 کروڑ سے زائد بنتی تھی۔

arnab goswami arrested, Khabarwalay.com

پولیس کا کہنا ہےکہ ارناب گوسوامی کی گرفتاری کے لیے پہنچے تو ان کی اہلیہ نے گھر کا دروازہ کھولنے سے انکار کردیا
جس پر کسی بھی الزام سے بچنے کے لیے گرفتاری کے پورے عمل کی ویڈیو بنائی گئی
جب کہ جیسے ہی پولیس ارناب کو گرفتار کرنے گھر میں داخل ہوئی تو
ان کی اہلیہ نےبھی ویڈیو بنانا شروع کردی اور پولیس پر حملہ کرنے کا الزام لگایا۔

arnab goswami arrested, Khabarwalay.com

بھارتی میڈیا کے مطابق آرکیٹیک ڈیزائنر انوے ملک اور ان کی والدہ 2018 فارم ہاؤس پر مردہ پائے گئے تھے
جب کہ پولیس کو انوے کے ہاتھ سے ایک پرچہ بھی ملا تھا
جس میں انہوں نے ان تین کمپنیوں پر رقم کی عدم ادائیگی کا الزام عائد کیا تھا
اور اسی بنا پر انہوں نے اور والدہ نے تنگ آکر خودکشی کی۔

بھارت کا نمبر1 نیوز چینل ریٹنگ چور نکلا

انوے ملک کی اہلیہ نے واقعے پر ارناب گوسوامی اور دیگر 2 افراد کے خلاف مقدمہ درج کرایا تھا
جس میں انہوں نے اپنے شوہر اور ساس کی موت کی وجہ ان تین افراد کو قرار دیا تھا۔

انوے ملک کے ہاتھ سے ملنے والے نوٹ کی بنیاد پر پولیس نے ارناب گوسوامی،
فیروز شیخ اور نتیش سردا کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا جس میں ان کی گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے
پولیس کا کہناہےکہ تحقیقات میں یہ بات ثابت ہوئی تھی کہ
انوے ملک نے پہلے اپنی ماں کا گلہ دبا کر انہیں قتل کیا اور پھر خودکشی کی۔


شیئر کریں: