یورپ کے بعد متحدہ عرب امارات میں بھی پاکستانیوں کا داخلہ بند

شیئر کریں:

کورونا وائرس کے پھیلاو نے پاکستانی شہریوں کی مشکلات میں اضافہ کردیا ہے۔
متحدہ عرب امارات نے پاکستانی شہریوں کے داخلے پر پابندی عائد کردی ہے۔
متحدہ عرب امارات کی جنرل سول ایوی ایشن اتھارٹی نے پاکستان سے آنے والی تمام فلائٹس کو معطل کردیا ہے۔
یو اے ای کی حکومت کے مطابق پاکستان پر سفری پابندیوں کا فیصلہ کورونا کے بڑھتے ہوئے پھیلاو کے باعث کیا گیا ہے۔
جب تک پاکستان کے ساتھ مل کر سفرکرنے والے شہریوں کے کورونا ٹیسٹ کی جامع حکمت مرتب نہیں کر لی جاتی تب تک فلائٹس معطل رہیں گی۔
کورونا کی وجہ سے پاکستانیوں کے یورپ میں داخل ہونے پر پابندی
اس سے پہلے یورپی یونین کے شینجن ممالک کو سیاحت کے لیے کھولنے کا اعلان کردیا ہے۔
شینجن ممالک نے دنیا کے چون ممالک کے شہریوں کو داخلے کی اجازت دی ہے۔
پاکستانی شہریوں کے یورپی ممالک میں داخلے پر پابندیاں بدستور برقرار رکھی گئی ہیں۔
اس سے پہلے ہانگ کانگ نے بھی پاکستانی شہریوں کے داخلے پر پابندی عائد کررکھی ہے۔
بین الاقوامی امور کے ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر پاکستان کورونا وائرس کو کنٹرول کرنے میں ناکام ہوجاتا ہے
تو آہستہ آہستہ دنیا کے دیگر ممالک کی طرف سے پاکستانی شہریوں کو سفری پابندیوں کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔


شیئر کریں: