عاصم باجوہ کا استعفی دال میں بہت کچھ کالا ضرور ہے؟

شیئر کریں:

وزیر اعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے اطلاعات عاصم سلیم باجوہ نے استعفی دے دیا ہے۔
عاصم باجوہ کی اضافی زمہ داری سے متعلق فراغت کی درخواست منظور کر لی ہے۔

اس طرح اب لیفٹننٹ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ صرف چیئرمین سی پیک اتھارٹی کی زمہ داریاں
ہی سنبھالیں گے۔

پچھلے دنوں مالیاتی اسکینڈل سامنے آنے کے بعد عاصم باجوہ نے اے آر وائی پر ٹیلی فونک بیپر دیتے
ہوئے مستعفی ہونے کا اعلان کیا تھا۔

“عاصم باجوہ منی ٹریل دو” ٹویٹر ٹاپ ٹرینڈ کے پیچھے کون؟

اگلے روز انہوں نے وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات کی اور استعفی دیا لیکن قبول نہیں کیا گیا تھا۔
آج عاصم باجوہ نے ٹوئیٹر پر اس بات کا اعلان کیا کہ وزیر اعظم نے ان کا استعفی منظور کر لیا ہے۔

اس ٹوئیٹ کے بعد جیو نیوز کے اینکر پرسن حامد میر نے کہا ہے کہ

” پہلے استعفی قبول نہیں کیا پھر کچھ دنوں بعد کر لیا؟ کیا اس کا مطلب یہ ہے کہ دال میں بہت کچھ کالا ہے؟”

عاصم باجوہ کی ٹوئیٹ سے پہلے وزیر اعظم ہاؤس سے 10 سکینڈ کی مختصر ترین ویڈیو جاری کی گئی۔

یہ ویڈیو سابق معاون خصوصی یوسف بیگ مرزا اور شہزاد اکبر سے ملاقات کی تھی۔
اس کا مطلب یہ ظاہر کیا جارہا ہے پاکستان ٹیلی وژن کی زمہ داریاں یوسف بیگ مرزا کے سپرد کی جاسکتی ہیں۔
یاد رہے یوسف بیگ مرزا کو مختلف پرائیویٹ نیوز چینلز کو چلانے کا تجربہ ہے۔
اس سے پہلے بھی وہ پاکستان ٹیلی ویژن کے سربراہ کے طور پر خدمات انجام دےچکے ہیں۔


شیئر کریں: