طالبان سے جھڑپ میں 18افغان فوجی ہلاک

شیئر کریں:

افغانستان میں طالبان اور افغان فورسز کے درمیان جھڑپوں میں طالبان کے ہاتھوں 18 افغان فوجی ہلاک ہوگئے ہیں۔عالمی میڈیا کے مطابق جھڑپیں افغان صوبے بادغیس میں اہم طالبان کمانڈر کی گرفتاری کے لئے ریڈ کے دوران شروع ہوئیں۔ صوبہ بادغیس کا ضلع ابکماڑی ساری رات میدان جنگ بنا رہا۔
صوبے کی انتظامیہ نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کو بتایاہے کہ 11 فوجیوں کو طالبان نے گرفتار کر لیا ہے 10 مزید لاپتہ ہیں۔طالبان نے 39 افغان فوجیوں کو مارنے اور 16 کو زندہ پکڑنے کا اعلان کیاہے۔واضح رہے کہ رواں سال اپریل میں بھی افغان صوبے بادغیس کے ضلع بالا مرغاب میں طالبان عسکریت پسندوں اور ملکی فوج کے درمیان جھڑپوں کے دوران 36 افغان فوجی ہلاک ہوگئے تھے، عسکریت پسندوں نے کئی چیک پوسٹوں پر بھی قبضہ کرلیا جبکہ جھڑپوں میں 30 سے زائد طالبان بھی مارے گئے۔
طالبان کے ترجمان نے حملے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا تھا کہ بالا مرغاب پر حملہ چار سمتوں سے کیا گیا۔
افغان صوبے بادغیس کے ضلع بالا مرغاب میں طالبان عسکریت پسندوں اور ملکی فوج کے درمیان شدید جھڑپوں کی ضلعی گورنر وارث شہرزاد نے تصدیق کردی ہے۔


شیئر کریں: