شاعر اہلبیت ڈاکٹر ریحان اعظمی کراچی میں انتقال کر گئے

شیئر کریں:

شاعر اہلبیت ڈاکٹر ریحان اعظمی انتقال کر گئے ہیں طبعیت خراب ہونے پر کراچی کے اسپتال لے
جایا گیا لیکن وہ جانبر نہ ہو سکے۔
ریحان اعظمی نے اپنے کیرئر کا آغاز حریت اخبار سے کیا تھا اور پھر انہوں نے شاعری میں اپنا نام بنایا۔
بے شمار نوحے، سوز و سلام اور مرثیے لکھے۔ مشہور نوحہ خواں ندیم رضا سرور کو عروج کی بلندیوں
پر پہنچانے میں ریحان اعظمی ہی کا ہاتھ ہے۔
ندیم سرور نے جب سے ریحان اعظمی کے لکھے ہوئے نوحے پڑھنے شروع کیے تو پھر ان کا پاکستان
کیا روئے زمین پر جہاں بھی فرش عزا بچھی وہاں کلام ریحان اعظمی اور بزبان ندیم سرور ہوتا۔

ندیم رضا سرور بلندیوں پر تو چلے گئے لیکن انہوں نے پھر ریحان اعظمی کو چھوڑ دیا۔
اس کا شکوہ مرحوم نے تو کبھی نہیں کیا کیونکہ انہوں نے تو کلام کربلا والوں کے لیے لکھا تھا۔
ریحان اعظمی کے قریبی ساتھی ضرور اس بات کا اظہار کرتے تھے کہ ندیم سرور نے پلٹ کے دوبارہ پوچھا بھی نہیں۔
بہرحال ریحان اعظمی جیسے شاعر مدتوں میں پیدا ہوتے ہیں ان کا خلا پر ہونے میں وقت لگے گا۔
لیکن ان کے لکھے ہوئے کلام عزادار پڑھتے رہیں گے اس طرح ریحان اعظمی کانام بھی ہمیشہ کربلا
والوں کے ساتھ جڑا رہے گا۔


شیئر کریں: