دورہ انگلینڈ کیلئے کرکٹرز کی فیملی سمیت انشورونس ہو گی

شیئر کریں:

پاکستان کرکٹ بورڈ کی کھلاڑیوں کو دورہ انگلینڈ کے لیے بریفنگ دی گئی۔
پی سی بی کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان اور ڈائریکٹر انٹرنیشنل کرکٹ ذاکر خان نے کھلاڑیوں کو بریف کیا۔
ڈاکٹر سہیل سلیم اور مصباح الحق بھی شریک ہوئے۔
کھلاڑیوں کو پی سی بی اور ای سی بی کے درمیان ٹیلی کانفرنس کے تناظر میں بریف کیا گیا۔
پی سی بی نے یقین دہانی کرائی کہ کھلاڑیوں کی صحت اور حفاظت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔
ریڈ اور وائٹ بال کے 25 کھلاڑیوں کو انگلینڈ لے کر جانے کا منصوبہ بنایا گیا ہے۔
25 کھلاڑی جولائی کے پہلے ہفتے میں انگلینڈ روانہ ہوں گے جو دورے کے اختتام تک وہاں موجود رہیں گے۔
انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کی گائیڈلائنز کے مطابق جون کے اوائل میں لاہور میں ٹریننگ سیشنز کے انعقاد کی منصوبہ بندی کررہے ہیں۔
ڈاکٹر سہیل سلیم، مصباح الحق اور وقار یونس حفظانِ صحت کے اصولوں کے مطابق کھلاڑیوں کے لیے ٹریننگ سیشنز ترتیب دیں گے۔
پی سی بی کھلاڑیوں کو انگلینڈ بورڈ کے ساتھ مزید بات چیت سے بھی آگاہ کرتا رہے گا۔
بظاہر آئندہ 3 ماہ پاکستان کرکٹ ٹیم کو بائیو سیکیور انتظامات میں رہنا پڑے گا۔
چیف ایگزیکٹو پی سی بی وسیم خان کا کہنا ہے کہ
کھلاڑیوں کے پاس دورے سے دستبرداری کی آپشن موجود ہوگی۔
حفاظتی اقدامات کے حوالے سے کھلاڑیوں کو مزید تفصیلات آئندہ چند ہفتوں میں فراہم کردی جائیں گی۔
ان غیرمعمولی حالات میں کھلاڑیوں کی لاہور میں ٹریننگ کے لیے ہر طرح کے انتظامات کرنے کے لیے تیار ہیں۔
پی سی بی نے نئے سنٹرل کنٹریکٹ میں کھلاڑیوں کی فیملی کے ہمراہ انشورنس کو یقینی بنایا ہے۔


شیئر کریں: