جنرل باجوہ عدالت کو بتائئں عمران خان کو کیسےلایا گیا

مسلم لیگ ن کے رہنما میاں جاوید لطیف نے اسلام آباد ہائی کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق امریکی
چیف جاوید قمر باجوہ پر تنقید کی اور کہا جنرل باجوہ عدالت میں جا کر بتائئں کہ عمران خان کو کس طرح لایا گیا تھا۔
اسی عدل کی عمارت سے انصاف ہو گا تو پاکستان آگے بڑھے گا۔ ایک شخص کہتا ہے سائفر کیس میں جنرل باجوہ اور امریکی
نمائندے کو بلواوں گا۔ میں سمجھتا ہوں یہ بڑا اچھا موقع ہے کہ جنرل باجوہ عدالت جائیں ۔

سیاستدان اور عدلیہ کب قابل تقلید ہوں گی؟

جنرل باجوہ قوم کو یہ بھی بتائیں کہ کس طرح نواز شریف کو مانیٹرنگ جج بٹھا کر سزا دلوائی گئی ۔یہ ایک بہرین موقع ہے کہ جنرل
باجوہ عدالت کو سچ بتائیں تاکہ عمران خان کی اصلیت قوم کے سامنے آسکے۔

پاکستان کا سب سے بڑا المیہ کیا ہے؟

بلاول بھٹو سے متعلق جاوید لطیف بولے جو لاڈلے کا الزام لگا رہے ہیں وہ زرداری صاحب کی ہدایت کو یاد رکھیں کہ بلاول
ابھی ناتجربہ کار ہے۔ بلاول اندرون سندھ کی فکر کریں جو ان کے ہاتھ سے نکلا جا رہا ہے۔
پورے پاکستان سے شخصیات کا ن میں شامل ہونا اور متعدد جماعتوں کی سیٹ ایڈجسٹمنٹ کرنا ن لیگ کی روایت مقبولیت
کا ثبوت ہے۔