تحریک انصاف کے دور حکومت میں 2 ہزار ارب روپے مالیت کے نوٹ چھاپ دیے

شیئر کریں:

حکومت نے اخراجات پورے کرنے کے لیے فروری کے پہلے دو ہفتوں میں اوسطا ہر روز سوا 12 ارب روپے کے نئے نوٹ جاری کیے۔ حکومت نے اپنی آدھی آئینی مدت میں مجموعی طور پر 2 ہزار ارب سے زائد مالیت کے نئے نوٹ جاری کیے۔
اسٹیٹ بینک کے مطابق فروری 2021 کے پہلے دو ہفتوں میں حکومت کی طرف سے مجموعی طور پر 171 ارب 29 کروڑ روپے کے نئے نوٹ جاری کیے گئے۔ جس سے ملک میں زیر گردش نوٹوں کی مجموعی مالیت 68 کھرب 49 ارب 33 کروڑ 10 لاکھ روپے کی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی۔
آمدنی کے مقابلے میں اخراجات آوٹ آف کنٹرول ہونے
کے باعث پی ٹی آئی حکومت نے قرض لے کر اور نئے
نوٹ چھاپ کر اخراجات پورے کرنے شروع کر دئیے
اور قرض لینے کے ساتھ ساتھ نئے نوٹ چھاپنے کا
بھی رکارڈ قائم کر دیا۔
پی ٹی آئی نے اپنی حکومت کی آدھی آئینی مدت،، یعنی ڈھائی سال میں مجموعی طور پر دو ہزار ایک ارب 53 کروڑ روپے کے نئے نوٹ جاری کیے جو مسلم لیگ ن حکومت کے پہلے ڈھائی سال کے مقابلے میں 106 فیصد اور پیپلز پارٹی کے پہلے ڈھائی سال کے مقابلے میں 268 فیصد زیادہ ہیں۔


شیئر کریں: