بھارت میں انسانسیت پھر شرماگئی، شوہر کو کاندھے پر اٹھانے کی سزا

شیئر کریں:

متعصب بھارت میں مسلمانوں اور دیگر اقلیتوں کے ساتھ ساتھ خواتین بھی غیر محفوظ ہیں۔
عجیب و غریب ظالمانہ رسم و رواج اور سزائیں خواتین کے حصے میں آتی ہیں کہ انسانیت شرما جائے۔
ایسا ہی ایک واقعہ پیش آیا ریاست مدھیہ پردیش میں جہاں ایک خاتون کو مبینہ تعلقات کے شبہ
میں گاؤں والوں نے اپنی ہی عدالت لگا لی۔

خاتون کو انوکھی سزا سنائی گئی اور سزا یہ تھی کہ خاتون اپنے شوہر کو کندھوں پر اٹھا کر لے جائے گی۔
مرتا کیا نہ کرتا کے مصداق دکھیاری خاتون نے شوہر کو کندھے پر اٹھا تو لیا لیکن چل نہ پائی اور گر گئی۔
بس کیا تھا ہاتھوں میں ڈنڈے اٹھائے مشتعل ہجوم نے بیچاری خاتون کو مارنا پیٹنا شروع کر دیا۔
خاتون کو مارنے کے ساتھ شوہر کو بھی اپنے کندھے پر بٹھا کر چلنا پڑا۔
واقعے کی فوٹیج سوشل میڈیا تک پہنچی تو ہر کوئی اپنے اپنے انداز میں تبصرے کرنے لگا۔

نیوانڈیا اور ویمن ایمپاورمنٹ کا ہیش ٹیگ چلا دیا ٹوئٹر پر خاتون صارف نے لکھا کہ ایک عورت شرمندہ ہے۔
شوہر لے جانے پر مجبور ہے پتھر کے دور کی سزائیں اکیسویں صدی میں خواتین کو برداشت کرنا پڑتی ہیں۔
تجزیہ کاروں کے مطابق ریاست مدھیہ پردیش کے جابوا ، علیراج پور اور دھر ضلع میں ایسی ظالمانہ سزائیں کوئی نئی بات نہیں۔
عوامی نمائندے بھی اپنی سیاست چمکانے کی خاطر خواتین کے ساتھ ایسے پیش آنے والے واقعات پر آواز نہیں اٹھاتے۔


شیئر کریں: