این جی او کی 4 خواتین کا قاتل طالبان کمانڈر سجنا برقعہ میں مارا گیا

شیئر کریں:

شمالی وزیرستان میں غیر سرکاری تنظیم سے وابستہ
چار خواتین کی ٹارگٹ کلنگ میں ملوث اہم دہشتگرد
مارا گیا۔میر علی میں سکیورٹی فورسز نے  خفیہ
اطلاعات پر ایک اور کامیاب  کاروائی کی ہے۔
آپریشن کے دوران گزشتہ روز  میر علی  کے گاؤں ایپی
میں این جی او کی چار خواتین ورکرز کو ٹارگٹ کیلنگ
کا نشانہ بنانے والے ٹی ٹی پی کے دہشتگرد کمانڈر حسن خان المعروف سجنا کو برقعے میں ملبوس حالت میں
میر علی بازار   میں نشانہ بنایا گیا۔دہشتگردکے قبضے
سے ہینڈ گرنیڈ   اور بھاری مقدار میں اسلحہ بھی برآمد ہوا۔
واضح رہے کہ دہشتگرد کمانڈر حسن خان المعروف
سجنا    2013  سے   میر علی ،شیرا تالہ اور خیسور  
کے علاقوں میں  سکیورٹی فورسز، پولیس اور سویلینز
کے خلاف دہشتگردی  بشمول  آئی ای ڈیزدھماکے ،علاقے کےلوگوں کی ٹارگٹ کلنگ  ،بھتہ خوری  اور اغواء برائےتاوان کی متعدد کاروائیوں میں ملوث تھا۔
سجنا نئے دہشتگردوں کی بھرتی اور تنظیم سازی
کا ذمہ دار تھا۔


شیئر کریں: