ایجوکیشن کیا ہے؟

شیئر کریں:

تحریر اجمل شبیر

دانائی کے گھر سے آج ہم بات کرتے ہیں ایجوکیشن پر ،ایجوکیشن کیا ہے؟

ایجوکیشن کو جڑ سے سمجھنے سے پہلے ہم نالج کو دیکھ لیتے ہیں،نالج دو قسم کا ہوتا ہے،
ایک نالج کا نام ہے
‏Theoretical knowledge
اور دوسرے نالج کو
‏Practical knowledge
کہتے ہیں

انفارمیشن یا نالج جو کتابوں میں لکھا ہوا ہے،اسے تھیوریٹیکل نالج کہتے ہیں۔ اس نالج کو جب اپلائی کیا جاتا ہے تو یہ بن جاتا ہے practical knowlede

پریکٹیکل نالج سے انسان کی skill develop ہوتی ہے

آپ کے پاس نالج ہے ،لیکن اگر آپ اس نالج کو practically یوز نہیں کرتے تو کبھی بھی کوئی skill آپ نہیں سیکھ سکتے
اس لئے نالج اور پریکٹیکل اپلیکیشن آف نالج میں بہت فرق ہے، ساری دنیا کا نالج اور انفارمیشن آپ کے برین میں سٹورڈ ہے لیکن اس نالج کو اگر آپ زندگی میں اپلائی ہی نہیں کرتے تو کبھی بھی آپ کوئی skill نہیں سیکھ سکتے

نالج یا انفارمیشن کا نام ایجوکیشن نہیں ہے

نالج یا انفارمیشن ایجوکیشن کے دو aspects ہیں لیکن صرف نالج یا انفارمیشن کو ایجوکیشن نہیں کہا جاسکتا ۔۔یہ ایجوکیشن کے دو پہلو ہیں۔۔۔
اب ہم بات کرتے ہیں کہ ایجوکیشن کیا ہے؟

کیا ایجوکیشن کا مطلب ہے کہ کیسے سوچنا چاہیئے؟ یا ایجوکیشن کا یہ مطلب ہے کہ کیا سوچنا چاہیئے اور کیا نہیں سوچنا چاہیئے

ہمیں گھر میں یا سماج میں ہمیشہ یہ کہا جاتا ہے کہ یہ سوچ ،یہ نہیں سوچ ،یہ سوچ اچھی ہے ،یہ سوچ بری ہے، ہمیں ایجوکیشن کے نام پر اچھائی برائی یا سچ جھوٹ کی تبلیغ کی جاتی ہے، صدیوں سے ہماری اسی طرح کنڈیشنگ کی گئی کہ یہ اچھا ہے،یہ برا ،یہ جائز ہے،یہ ناجائز ہے،یہ حلال اور یہ حرام ہے

ہماری کنڈیشنگ اسی طرح کی گئی کہ جو آپ کا faith ہے ،وہی سچ ہے ،دوسرے کا faithجھوٹ ہے،دوسرے کے بیلیف یا فیتھ پر غور کرو گے تو بھٹک جاو گے ،اس لئے ہمیشہ سارا دھیان اپنے فیتھ پر رکھو کیونکہ سارا سچ اسی میں ہے، دوسری طرف جھوٹ کے سوا کچھ نہیں
ہمارا بیلیف یا فیتھ یا ہمارا تھاٹ جسے ہم اپنا تھاٹ سمجھتے ہیں،وہ کیا ہے ،ایک پوائنٹ آف ویو ہی ہے ،ایک سٹینڈ پوائنٹ ہی ہے ،اس کے علاوہ تو کچھ نہیں،دوسرے کا بیلیف یا فیتھ بھی ایک سٹینڈ پوائنٹ ہے، آپ لبرل ہو ،یہ ایک سٹینڈ پوائنٹ ہے،آپ ریلیجئیس ہو ،یہ بھی ایک سٹینڈ پوائنٹ ہے،آپ اتھیسٹ ہو یہ بھی ایک سٹینڈ پوائنٹ ہے ،آپ spiritual ہو یہ بھی ایک سٹینڈ پوائنٹ ہے ،یہ سب کچھ standpoints ہیں ،اس کے سوا کچھ نہیں

میں شیعہ ہوں ،توں سنی ہے،وہ وہابی ہے ،دوسرا صوفی ہے، یہ کیا ہے؟
‏These are all just standpoints

کیا سٹینڈ پوائنٹس کا نام ایجوکیشن ہے، ہم سب اپنے اپنے سٹینڈ پوائنتس میں پھنسے پڑے ہیں،سب نے اپنے اپنے سٹینڈ پوائنٹ کو رٹ رکھا ہے ،ہر ایک کہہ رہا ہے اس کا سٹینڈ پوائنٹ سچ ہے اور دوسرے کا جھوٹا ،کیا یہ ایجوکیشن ہے؟

کیا ایجوکیشن کا یہ مطلب ہے کہ کیسے سوچنا چاہیئے؟
کچھ کرنے سے پہلے ہم سوچتے ہیں،کسی بھی ایکشن کو کرنے سے پہلے ہم سوچتے ہیں ،یہ ایک نیچرل پراسس ہے،ایکشن کی بھی دو اقسام ہیں،ایک ایکشن خود بخود ہورہا ہے، سارے انسان ،سب جانور وہ ایکشن کرتے ہیں،بھوک لگی تو بھوک کو مٹانے کے لئے ہم کھانا کھاتے ہیں،پیاس لگی تو پیاس کو بجھانے کے لئے ہم پانی پیتے ہیں، یہ ایک نیچرل پراسس ہے ،جانور ہوں یا انسان سب میں یہ ایک natural tendency ہے

اس طرح کے ایکشن کے لئے ہمیں بہت زیادہ سوچنا نہیں پڑتا
بھوک لگی تو کھانا کھالیا ،پیاس لگی تو پانی پی لیا

سوچیں ایک نظریہ ہے وہ آپ کے برین میں فیڈ کردیا گیا ہے ، ایک بیلف یا فیتھ ہے جو آپ میں فیڈ کردیا گیا ہے ،اب آپ اسی فیڈڈ تھاٹ کی بنیاد پر زندگی کو دیکھ رہے ہو ،زندگی کو سمجھ رہے ،کیا یہ ایجوکیشن ہے؟ کیا اس طرح آپ grow کرسکتے ہو؟

‏This is not an education
‏This is called robotic life, and human beings are not robots.

آپ کے برین میں جس نظریئے کو فیڈ کیا گیا ہے ،آپ کو نہیں معلوم وہ نظریہ ٹھیک ہے یا وہ سورس آف ایجوکیشن ٹھیک ہے یا نہیں، کیونکہ وہ آپ میں فیڈڈ ہے تو اس کے مطابق آپ چلتے جارہے ہو ،جیسے روبوٹ میں ایک پروگرام فیڈ کیا جاتا ہے تو روبوٹ اسی پروگرام کے مطابق کام کرتا ہے ،لیکن انسان تو روبوٹ نہیں، انسان تو کانشئینس ہے ۔۔۔کانشئینس کیسے فیڈڈ تھاٹ کی بنیاد پر زندگی کو دیکھ سکتی ہے ؟

ایک ایجوکیشن جو آپ نے دس پندرہ سال پہلے حاصل کی تھی ،جو اس وقت کے لئے relevent تھی ،اگر آج بھی ہم اسی ایجوکیشن کی بنیاد پر زندگی کو دیکھ رہے ہیں تو وہ ایجوکیشن کیسے آج کے لئے relevent ہوسکتی ہے

انسان کے لئے سب سے اہم سوال کیا ہے؟

انسان کے لئے سب سے پہلا سوال ہے
‏How to think ?
انسان جس دن یہ سیکھ گیا کہ سوچتے کیسے ہیں تو کیا ہوگا پھر انسان right understanding کو یوز کرکے رائیٹ ایجوکیشن حاصل کرسکتا ہے

آج کی دنیا بدل گئی ہے
‏Now we are living in the information age.
اس انفارمیشن ایج میں لامحدود انفارمیشنز ہیں، اتنی انفارمیشن کے جس کی کوئی حد نہیں ہے

اب اس انفارمیشن ایج میں اہم کیا چیز ہے؟

اہم یہ ہے کہ آپ کس طرح کی انفارمیشن اپنے برین میں بھر رہے ہیں، کیسی انفارمیشن کو آپ اپنے اندر جانے دے رہے ہیں اور وہ کونسی انفارمیشن کو آپ اپنے اندر جانے نہیں دے رہے

اس دنیا میں کروڑوں نہیں اربوں بکس ہیں ،ہر لمحے بکس شائع ہورہی ہیں، لاکھوں کروڑوں انسان یہ بکس پڑھ رہے ہیں، اب ان اربوں بکس میں سے کونسی بکس آپ نے پڑھنی ہے اور کونسی نہیں ،یہ فیصلہ آپ نے کرنا ہے۔

یوٹیوب پر لامحدود ویدیوز ہیں، ہر ٹاپک پر لاکھوں ویڈیوز پڑی ہیں ،کونسی ویڈیو آپ دیکھیں کونسی نہ دیکھیں ،یہ فیصلہ آپ نے کرنا ہے

آپ کبھی سوچتے ہی نہیں کیا پڑھنا ہے ،کیا نہیں پڑھنا ،کیا دیکھنا ہے،کیا نہیں دیکھنا ،بس سامنے جو آرہا ہے،پڑھتے جارہے ہو ،دیکھتے جارہے ہو ،سنتے جارہو ۔۔۔یہ بے وقوفی ہے جو اس انفارمیشن ایج میں ہم کررہے ہیں

اس دنیا میں لوگ بکس اور یوٹیوب پر کیا دیکھا رہے ہیں،وہ سب کچھ جو آپ دیکھنا چاہتے ہیں،وہ دیکھائی جارہے ہیں،ہم دیکھتے جارہے ہیں،یہ پرابلم ہے؟ اس وجہ سے انفارمیشن ایج سے ہم grow کرنے کی بجائے مزید confuse ہو رہے ہیں

‏What is fact?
‏Majority of people are idiots

انسان grow کیوں نہیں کررہا؟ کبھی سوچا؟ لوگوں کی اکثریت سوچتی نہیں ،بس جو دیکھا دیا ،سنا دیا ،پڑھادیا ،اسے رٹ لیتی ہے اور اس طرح زندگی ان کی چلتی ہے،کچھ لوگ ہی ہوتے ہیں جو سوچتے ہیں ،سوال اٹھاتے ہیں، رائیٹ انڈر سٹینڈنگ کا یوز کرکے سوال اٹھاتے ہیں ،وہی grow کرتے ہیں ،grow کون کرتا ہے جو سوال اٹھاتا ہے، ایجوکیشن کا مطلب ہی سوال اٹھانا ہے

مسئلہ ایک ہی ہے ہم خود سے سوچنے کی اہلیت ہی نہیں رکھتے ،اس کی وجہ یہ ہے کہ ہماری کنڈیشنگ بہت پاورفل طریقے سے کی گئی ہے،ہماری کنڈیشنگ جن لوگوں نے کی ہے وہ خود مکمل طور پر programmed ہیں۔

اس طرح کی situation میں سوال یہ ہے کہ ہم کیسے سوچے ،سوچنے کا اصل طریقہ کیا ہے،کیسے سوچا جاتا ہے؟ ہم تب سوچ سکتے ہیں جب ہم ان لوگوں سے جڑیں گے جنہیں سوچنا آتا ہے،جنہیں سوچنا آتا ہے ،انہیں سامنے آنے نہیں دیا جاتا ،سماج کو خطرہ ہے کہ یہ سامنے آگئے تو ان کی روزی روٹی پر لات پڑے گی

آپ جہاز اڑانا چاہتے ہو تو اسی سے جہاز اڑانا سیکھو گے جسے جہاز اڑانا آتا ہے ،جسے جہاز اڑانا آتا ہی نہیں وہ کیسے آپ کو سیکھائے گا کہ جہاز کیسے اڑایا جاتا ہے؟

سوچ میں growth چاہیئے یا سوچتے کیسے ہیں یہ سیکھنا ہے تو ایسے انسان کے ساتھ contact میں آنا پڑے گا جو یہ جانتا ہے کہ سوچتے کیسے ہیں؟

ایجوکیشن کے نام پر اس وقت اس انفارمیشن ایج میں جو ننانوے فیصد available ڈیٹا ہے وہ سب کچڑا ہے چاہے وہ یوٹیوب پر پڑا ہے چاہے وہ گوگل پر پڑا ہے چاہے وہ کہیں بھی پڑا ہے

ہم کچڑا ہی برین میں ڈال رہے ہیں،اس وجہ سے کچڑا ہی ہم سے نکل رہا ہے

‏Garbage in and garbage out
یہ ہے ہماری حالت

ہر وہ نالج یا انفارمیشن جسے عملی طور پر آپ اپنی زندگی میں استعمال کرسکتے ہو ،وہ نالج یا انفارمیشن سہی ہے

تمام وہ concepts،نظریات ،تھاٹس ،خیالات جو تھیوریٹیکل ہے ،جن کا پریکٹیکل لائف سے کوئی لینا دینا نہیں ہے وہ سہی نہیں

اردو کی ایک ڈکشنری ہے ،وہ ساری ڈکشنری آپ رٹ لیتے ہو ،اس سے کیا ہوگا ،اس میں کیا کمال ہے، پریکٹیکلی اس کا کیا فائدہ ہے

‏It’s all useless
زندگی آپ کی ہے ،آپ نے اگر یہ معلوم کر لیا ہے، اس زندگی میں ،،،،میں نے کیا کرنا ہے،،،،تو سامنے اینفارمیشن اور نالج کا سمندر ہے،،،،جب آپ نے figure out کر لیا ،میں نے کیا کرنا ہے تو اب آسان ہوگیا ہے کہ کونسان نالج اور انفارمیشن میں نے سمندر سے اٹھانا ہے

سٹوڈنتس جن کی عمریں اٹھارہ سے پچیس سال کے درمیان ہیں ، وہ بیچارے جانتے ہی نہیں انہین زندگی میں کرنا کیا ہے تو انہیں معلوم ہی نہیں انہیں کیسی انفارمیشن اور نالج چاہیئے، اس لئے سامنے جو بھی نالج یا انفرمیشن نظر آتی ہے ،وہ اسے consume کر لیتے ہیں اور اسی کے پیچھے چلتے ہیں ،کچھ دیر بعد جب بور ہوجاتے ہیں تو کسی اور انفارمیشن کے پیچھے بھاگ پڑتے ہیں، بیچاروں کی دوڑ لگی ہوئی ہے

‏Filtration is very important
‏What is filtration?
فلٹریشن یہ کہ کیا کرنا ہے اور کیا نہیں کرنا ہے

آپ کو اگر یہ بھی معلوم ہوگیا کہ میں نے یہ نہیں بننا تو کیا ہوگا جو نہیں بننا اس سے متعلق جو بھی نالج یا انفارمیشن موجود ہیں اس سے آپ کو آزادی مل گی

‏Information or knowledge is not good not bad ,information is information,you can not label that this information is good and that information is bad .information is like energy, if you will use this in right way then you will grow ,if you will use these information in wrong way ,then these information are harmful.
انرجی سے ایٹم بم بھی بنتا ہے اور انرجی سے دنیا کی بھلائی بھی کیا جاسکتی ہے ،اب یہ آپ پر ہے کہ کیسے آپ اس انرجی کا یوز کرتے ہو

سٹوڈنٹ کے لئے سب سے پہلا سوال یہ ہے جو انہوں نے خود سے کرنا ہے کہ انہیں کیسی زندگی چاہیئے؟ انہیں کیا کرنا ہے؟ دوسرا اہم سوال جو کرنا ہے وہ یہ ہے کہ انہیں کیسی زندگی نہیں چاہیئے،وہ کیا کام ہیں جو وہ کرنا ہی نہیں چاہتے ،اگر یہ بھی معلوم ہوگیا کہ زندگی میں یہ کام ہیں جو میں نے کبھی کرنے ،اس سے کیا ہوگا کہ جو کام آپ نے نہیں کرنے اس سے متعلق برین میں جو انفارمیشن پڑی ہیں بری یا اچھی وہ سب نکل جائیں گی اور آپ ریلیکس ہوجاو گے ،سوچنے کا پراسس شروع ہوجائے گا

‏This is called screening
کیا کرنا ہے؟ کیا نہیں کرنا ہے؟
‏This screening is very important for growth

‏What is education?
یہ سب سے اہم سوال ہے
ایجویشن کیا ہے؟ ایجوکیشن وہ ہے جو ہمیں گھر میں بتایا جاتا ہے ،جو سماج بتارہا ہے کہ یہ کرو یہ نہ کرو ،کیا یہ ایجوکیشن ہے؟

کیوں ضروری ہے ایجوکیشن؟
کیا کرتی ہے ایجوکیشن؟
سب ایجوکیشن ایجوکیشن کا رٹا لگائے ہوئے ہیں،کیوں چاہیئے؟

جانور ،پرندے تو ایجوکیٹڈ نہیں ہیں ،وہ تو ایجوکیشن لفظ سے بھی ناواقف ہیں، زندگی ان کی انسانوں سے ہزار گنا بہتر ہے،ہمیں کیوں چاہیئے ایجوکیشن؟ ایجوکیشن کا مقصد کیا ہے ڈگری، ڈپلومہ ،نوکری ؟ کیا ہے اس کا مقصد

سماج ،والدین ،دنیا ایجوکیشن کو کیسے define کرتی ہے؟ والدین کے لئے ڈگری ڈپلومہ اور نوکری یہ ہے ایجوکیشن ،دنیا کے لئے یہ ہے ایجوکیشن ۔۔۔

اگر ایجوکیشن ڈگری اور ڈپلومہ ہے ،ایجوکیشن کا نام نوکری ہے ،تو کیا اس دنیا میں جوکروروں لوگ ہیں اور جن کے گھر ڈگریز ،ڈلوماز سے بھرے پڑے ہیں،کیا ان کی زندگی بہتر ہے

دنیا کے لئے اچھی ڈگری ،ڈپلومہ ،اچھی جاب ،جس سے اچھے پیسے مل جائیں ،یہ ایجوکیشن ہے،اسے دنیا والے ایجوکیشن کہتے ہیں

دنیا کی اس definition کے مطابق دس فیصد ڈگری ڈپلومہ والوں کو نوکری مل رہی ہے ،نوے فیصد بے روزگار ہیں ،انہیں نوکری ہی نہیں ملتی ۔۔۔

یہ سوال کریں خود سے کہ ایسی ایجوکیشن کا کیا فائدہ؟ سٹوڈنٹ خود سے سوال کریں ڈگری ڈپلومہ والی زندگی کے کیا فائدے ہیں،کیا نقصانات ہیں اور کیا اسے ایجوکیشن کہتے ہیں

دنیا میں بہت سے لوگ ایسے ہیں جن کے پاس ڈگری ڈپلومہ نہیں ہے،لیکن ان کے پاس skill ہے ،اس skill کی وجہ سے وہ ڈگری اور ڈپلومہ والوں سے زیادہ پیسے کما رہے ہیں ،تو کیا وہ uneducate ہیں۔ جو ڈپلومہ اور ڈگری رکھتے ہیں وہ بھی جاب چاہتے ہین،safe and secured جاب چاہتے ہیں ، جس کے پاس skill ہے ڈگری ڈپلومہ نہیں اور وہ پیسے کما رہا ہے تو کیسے اسے جاہل کہا جاسکتا ہے

سٹوڈنٹس خود سے سوال کریں
‏Why they need degrees and diplomas?

پیسہ ہی کمانا ہے تو آن لائن کورسز کر لو ،کوئی skill سیکھ لو ،آن لائن پیسہ کمانے کے لاکھوں مواقع ہیں ، لاکھوں قسم کی skill ہے ،پھر کیوں ڈگری اور ڈپلومہ کی ضرورت ہے ؟

ایجوکیشن کے دو مقصد ہیں
ایک مقصد ہے financial freedom
یہ فیرڈم اہم ہے ، صرف financial security ایجوکیشن نہیں ہے ،ایجوکیشن کا مقصد صرف جاب نہیں ہے، ایجوکیشن کا مقصد صرف ڈگری نہیں ہے،ڈگری مل گئی ،جاب نہیں ہے تو ڈگری کا کیا کروگے
ایجوکیشن کا مقصد فناشئیل فریڈم ہے
‏Financial freedom is the highest possibility of education

ایجوکیشن سے financail security چاہتے ہو تو کچھ اور کر لو ،کوئی skill سیکھ لو ،وہاں سے بھی تیس پنتیس ہزار مل جائیں گے ،پھر ڈگری کیوں لینی ہے
بیس سے چالیس ہزار کمانے ہیں تو جاو گاڑی ڈرائیو کرنا سیکھو ،اوبر سے آسانی سے تیس چالیس ہزار کماو ، گاڑی چلانے کے لئے ڈگری کیوں لینی ہے ، ڈگری کے لئے پانچ لاکھ دو گے ،وہی اپنی گاڑی خرید لو اور چلاو

‏Education is not status
ہم ایجوکیشن کو سٹیٹس سمجھتے ہیں

ایجوکیٹڈ ہونے سے لوگ میر عزت کریں گے ،میرا ایک سٹیٹس ہوگا کہ میرے پاس یہ ڈگری ہے ،ایجوکیشن کو ہم نے سٹیٹس سمبل بنا دیا ہے

ایجوکیشن سے نہ سٹیٹس بڑھتا ہے نہ کم ہوتا ہے، ہم سٹیتس میں پھنسے پڑے ہیں،ایجوکیشن چاہیئے آپ کو finacial امپروومنٹ کے لئے،
‏Financial freedom is the biggest goal of education

فناشئیل فریڈم کیا ہے؟ فنشئیل فریڈم یہ ہے کہ آپ ایک کام کررہے ہو ،اس سے آپ نے بہت پیسہ کما لیا ،اب اس کام سے بور ہوگئےہو کچھ نیا کرنا چاہتے ہو ،اب کچھ نیا کرنا ہے تو آپ کے پیسے اتنے پیسے ہوں کہ آپ کو کوئی پرابلم نہ آئے اور وہ جو کچھ اور کرنا چاہتے ہو ،مکمل فوکس کے ساتھ کر سکو

‏This is financial freedom
ڈگری اس لئے نہیں لینی کہ دنیا واہ واہ کر اٹھے

دنیا کے ہر انسان میں creativity بھری پڑی ہے، اس creativity کو express کرنے کا نام زندگی ہے، اس creativity کو باہر لانے کا نام real education ہے

ہم ڈگری،ڈپلومہ ،سٹیتس کے پیچھے بھاگ رہے ہیں، ساتھ والے کا بیٹا انجئیر بن گیا ،میں نے بھی بیٹے کو انجئینر بنا نا ہے ،ساتھ والے کا بیٹا بڑا افسر لگ گیا ،لال بتی والی گاڑی میں گھومتا ہے،مجھے بھی بچے کو سرکاری نوکر بنانا ہے ،کیوں عزت بن جائے گی ، لوگ واہ واہ کریں گے

‏Education is not status
سٹیتس گدھوں خچروں کی ضرورت ہے،وہ انسان جو اندر سے کھوکھلے ہیں انہیں سٹیٹس چاہیئے، جو اندر سے creativity اور creative vision کو exploreکر چکے ہیں اور creative way پر چل کر کچھ نیا کررہے ہیں انہیں سٹیٹس کی ضرورت نہیں ہوتین، وہ یہ نہیں سوچتے دنیا کیا کہے گی ،دنیا جائے بھاڑ میں ،اہم ہے میں کیا سوچ رہا ہوں، جو میں سوچ رہا ہوں ،وہ اہم ہے
‏This is education

‏Uneducated people need status
‏Shallow people need status
دنیا کے غلاموں کو سٹیٹس کی ضرورت ہے، رومی یا ایلان مسک کو سٹیٹس کی ضرورت نہیں ،

حقیقی تعلیم یافتہ کون ہے جس میں کوئی بھی کام چھوٹا برا نہیں

جاہل کون ہے جس کے لئے ایک کام سٹیٹس سمبل ہے اور دوسرا کام چھوٹا

‏These are uneducated people

ایک مقصد ہوگیا ایجوکیشن کا financial freedom اور دوسرا اہم رول ایجوکیشن کا یہ ہے کہ آپ کی سوچنے کی صلاھتیں grow کریں،
‏Development of thinking abilities is called real education.

‏Brain is divided into two parts ,one is logical thinking and second is creative thinking.

دونوں grow کریں اس کہتے ہیں ایجوکیشن

کچھ create کرنا اور اپنے فیوچر کو scintific mind سے plan کرنا اگر آپ کو آتا ہے تو اس کا مطلب ہے ایجوکیشن آپ کی لائف کو بہتر کررہی ہے ،لیکن ہم تو creative feild اور پلیننگ کو جانتے ہی نہیں ،صرف سٹیٹس کے پیچھے بھاگ رہے ہیں

دنیا بھاگ رہی ہے،آپ بھی بھاگ رہے ہو ،وہاں پہنچ بھی گئے ،کیا ہوجائے گا ،کیا اکھاڑ لو گے ،کیا خوشی مل جائے گی ،نہ جی ،وہاں پہنچو گے تو ایک کام ہوگا ،اینڈ میں مایوسی ہوگی

مونا لیزا پینٹنگ بنانے والا creative ہے ،سب بھاگ رہے تھے وہ پینٹنگ بنا رہا تھا ،مدہوش تھا ،وہ creativity کی peak تک پہنچا اور معجزہ کردیا ،آج بھی اس معجزے کے چرچے ہیں
‏This is creativity
‏Education improve this kind of creativity

آج کے نوجوان کا ایک ہی ایشو ہے ،ہر نوجوان کرنا بہت کچھ چاہتا ہے ،معجزے برپا کرنا چاہتا ہے ،لیکن جو وہ تعلیم حاصل کررہا ہے ، اس کا مقصد سٹیٹس ہے ،سٹیس کو پانا ہے ، اس سٹیٹس کو پانے کے چکر میں وہ والدین ،سماج ،دنیا والوں کا ٹارچر جھیل رہا ہے ، اسے ڈاکٹر نہیں بننا ،سنگر بننا ہے ،لیکن والدین ،دنیا والے اسے بتا رہے ڈاکٹر بنو ،عزت ہوگی ،سٹیٹس بڑھے گا ،اب وہ اسی وجہ سے ڈاکٹر بن رہا ہے کہ عزت ملے گی ،سٹیٹس ملے گا ،والدین بھی یہی چاہتے ہیں ،تو کرو جو والدین چاہتے ،دنیا چاہتی ہے ،ریس لگی ہے ،پہلے ہی لاکھوں گدھے بھاگ رہے ہیں ،ایک اور گدھا بھاگ پڑے گا تو کیا فرق پڑ جائے گا

جو بھی کرنا ہے دل سے کرو
‏Follow your passion,Put your heart and soul in your passion
‏Follow your passion,not status,status is a rat race.

زندگی کو جینا ہے
یا زندگی میں گھٹ گھٹ کر مرنا ہے
زندگی ایلان مسک جی رہا ہے ،اپنے پیشن کو فالو کررہا ہے،دنیا کا دوسرا امیر ترین انسان ہے ،لیکن اسے پرواہ ہی نہیں

پیشن نے اسے مالا مال کردیا پرواہ نہیں، اس لئے زندگی جی رہا ہے ،زندگی کو جینے کا مزہ اپنے پیشن کو فالو کرنے میں ہے نہ کہ سٹیٹس کے پیچھے بھاگنا ہے

کیا آپ جانتے ہیں سب سے زیادہ ہارٹ اٹیکس کس دن ہوتے ہیں؟

سائنسی تحقیق کے مطابق سب سے زیادہ ہارٹ اٹیکس منڈے کے دن ہوتے ہیں،کیوں؟ نوکری پر جانا ہے ،یا وہ کام کرنے پھر جانا ہے ،جو ہمیں پسند نہیں ،

وہ کام کرو جو پسند ہے
جہاں سے پیسہ بھی کمایا جاسکتا ہے
جہاں اھی زندگی بھی انجوائے کی جاسکتی ہے

‏This is beautiful and smart life

‏Life is not the name of one direction

زندگی کو ایلان مسک کیوں مزے سے جی رہا ہے؟ کیوں؟
‏Because he is a multidimensional human being

لائف جینی ہے تو آپ کو بھی multidimentional approach کو اختیار کرنا پڑے گا
‏This is education

ایجوکیشن کو اگر ایک لائن میں ڈیفائن کرنا ہے تو اس کا مطلب ہے اچھی لائف کے بارے میں آپ کو معلوم ہونا چاہیئے کہ اچھی لائف کیا ہوتی ہے ،ایجوکیشن اچھی لائف کو explore کرنے میں آپ کی مدد کرسکتی ہے

اچھی لائف کیا ہے
‏When you are independent
اچھی لائف کیا
‏When you are enjoying financial freedom
اچھی زندگی وہ ہے جس میں آپ اپنی creativity کو ایکسپریس کرپارہے ہو
اچھی زندگی یہ ہے کہ جب آپ اپنے پیشن کو فالو کررہے ہو ، دنیا بھاگ رہی ہے اور آپ اپنے پیشن میں کھو گئے ہو

‏Information is not education,how you are using this information and knowledge ,this art is called education.


شیئر کریں: