افغانستان میں گھر پر بمباری بچوں اور عورتوں سمیت 18 افراد ہلاک

شیئر کریں:

افغانستان کے صوبے نیمروز میں ایک گھر پر فضائی بمباری سے ہلاک افراد کی تعداد 18 پہنچ گئی ہے۔
رپورٹ کے مطابق نیمروز کے ضلع خاشرود کی کلی منازاری میں طالبان کے شبے میں افغان فضائیہ نے
ایک گھر کو نشانہ بنایا۔
شبہ غلط ثابت ہوا لیکن حملے میں 8 بچوں اور 7 خواتین سمیت ایک ہی گھرانے کے 18 افراد جاں بحق ہو گئے۔
متاثرین نے واقعہ کے خلاف سخت احتجاج کیا لاشیں دارالحکومت میں گورنر ہاوس کے سامنے رکھ کے
حکومت سے انصاف کا مطالبہ کیا گیا۔
افغان فوج نے فضائی حملے میں شہریوں کے مارنے جانے کی تحقیقات کا اعلان کر دیا۔
خیال رہے کہ چند روز قبل افغانستان کے جنوبی صوبے ہلمند کے دارالحکومت لشکر گاہ کے قریب بشران

میں امریکی ڈرون حملے میں بھی خواتین و بچوں سمیت پانچ شہری مارے گئے تھے۔
افغانستان میں بین الافغانی مذاکرات کے آغاز کے بعد پر تشدد کارروائیوں میں اضافہ ہو چکا ہے۔
طالبان اور افغان فورسز ایک دوسرے پر شدید حملے کر رہے ہیں بڑھتی ہوئی کشیدگی کے باعث امن عمل
کو نقصان پہنچنے کے خدشات کا اظہار کیا جانے لگا ہے۔


شیئر کریں: