اسکول ٹیچرز کو پیٹنے پر ماں کو2سال جیل

شیئر کریں:

اسکول ٹیچرز پر حملے کے جرم میں ماں کو ایک سال جیل کی سزا ہوگئی۔
سعودی عرب کی عدالت نے خاتون کو دو اسکول ٹیچرز کو تشدد کا نشانہ بنانے کے جرم میں ایک سال جیل کی سزا سنادی۔
خاتون پر اساتذہ کو زبانی اور جسمانی حملے ثابت ہونے پر سزا سنائی گئی۔
وکیل کا کہنا ہے کہ خاتون نے اساتذہ پر اس وقت حملہ کیا جب بچے تعلیم مکمل کرکے گھروں کو وآپس جارہے تھے۔
خاتون نے اساتذہ کو صلح کے لیے 26ہزار ڈالر دینے کی آفر کی جو انہوں نے ٹھکرا دی۔
موبائل استعمال کرنے پر ٹیچر معطل
وکیل کا کہنا ہے کہ تشدد کرنے والی خاتون نے اساتذہ کے خلاف ہی درخواست دائر کردی۔
جب اساتذہ نے خاتون کے خلاف درخواست دائر کی تو تحقیقات کے
بعد یہ بات ثابت ہوئی کہ ماں نے دو اساتذہ کو تشدد کا نشانہ بنایا۔
اسکول انتظامیہ کا کہنا ہے کہ خاتون نے اساتذہ کو اس وقت تشدد کا نشانہ بنایا
جب اساتذہ نے خاتون کی بات ماننے سے انکار کیا۔
خاتون نے اساتذہ کو حکم دیا تھاکہ وہ اس کے بچے کو لے کر آئیں جو میدان میں کھیل رہا تھا۔
اساتذہ نے بچے کو بلانے سے انکار کیا تو خاتون نے اساتذہ کو تشدد کا نشانہ بنایا۔


شیئر کریں: